پاکستان تحریک انصاف اور جماعت اسلامی کا خیبر پختونخواہ میں بلدیاتی انتخابات مل ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل جنوری

مزید اہم خبریں

تاریخ اشاعت: 2015-01-13
تاریخ اشاعت: 2015-01-13
تاریخ اشاعت: 2015-01-13
تاریخ اشاعت: 2015-01-13
تاریخ اشاعت: 2015-01-13
تاریخ اشاعت: 2015-01-13
تاریخ اشاعت: 2015-01-13
تاریخ اشاعت: 2015-01-13
تاریخ اشاعت: 2015-01-13
تاریخ اشاعت: 2015-01-13
تاریخ اشاعت: 2015-01-13
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

تلاش کیجئے

پاکستان تحریک انصاف اور جماعت اسلامی کا خیبر پختونخواہ میں بلدیاتی انتخابات مل کر لڑنے کا فیصلہ ‘ انتخابی اتحاد کا فیصلہ دونوں جماعتوں کے درمیان وفود کی سطح پر ہونے والی ملاقات میں ہوا ،دونوں جماعتیں مشترکہ امیدوار کھڑے کریں گی،ضلع‘ تحصیل اور یونین کونسل کی سطح پر امیدوار کھڑے کرنے کا حتمی فیصلہ اور لائحہ عمل بعد میں طے کیا جائے گا، بلدیاتی انتخابات کے حوالے سے شیڈول اپریل کے آخر میں جاری کیا جائے گا،عنایت اللہ

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔13جنوری۔2015ء) پاکستان تحریک انصاف اور جماعت اسلامی نے خیبر پختونخواہ میں بلدیاتی انتخابات مل کر لڑنے کا فیصلہ کرلیا‘ انتخابی اتحاد کا فیصلہ دونوں جماعتوں کے درمیان وفود کی سطح پر ہونے والی ایک ملاقات میں ہوا۔ تفصیلات کے مطابق پشاور میں پاکستان تحریک انصاف اور جماعت اسلامی کے صوبائی وزراء کے وفود کی سطح پر اجلاس ہوا جس میں پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے سپیکر صوبائی اسمبلی اسد قیصر‘ عاطف خان‘ مسعود خان‘ شاہ فرمان اور جماعت اسلامی کی جانب سے پروفیسر ابراہیم‘ مظفر سید اور وزیر بلدیات خیبر پختونخواہ عنایت اللہ نے شرکت کی۔

اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ جماعت اسلامی اور تحریک انصاف خیبر پختونخواہ میں بلدیاتی انتخابات مل کر لڑیں گی۔ بلدیاتی انتخابات میں دونوں جماعتیں مشترکہ امیدوار کھڑے کریں گی تاہم ضلع‘ تحصیل اور یونین کونسل کی سطح پر امیدوار کھڑے کرنے کا حتمی فیصلہ اور لائحہ عمل بعد میں طے کیا جائے گا۔ دونوں پارٹیوں کا اتحاد اس حوالے سے خاصی اہمیت رکھتا ہے چونکہ ا سے قبل صوبے میں پیپلزپارٹی‘ عوامی نیشنل پارٹی اور جمعیت علمائے اسلام کا پہلے ہی انتخابی اتحاد ہوچکا ہے بعدازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے صوبائی وزیر بلدیات خیبر پختونخوا عنایت اللہ نے کہا کہ بلدیاتی انتخابات کے حوالے سے شیڈول اپریل کے آخر میں جاری کیا جائے گا۔ بلدیاتی انتخابات میں دونوں پارٹیاں اپنے اپنے مشترکہ امیدوار کھڑے کریں گی۔

13-01-2015 :تاریخ اشاعت