2014ء :شام میں 76 ہزار سے زیادہ ہلاکتیں ہوئیں، اقوام متحدہ
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ جنوری

تلاش کیجئے

2014ء :شام میں 76 ہزار سے زیادہ ہلاکتیں ہوئیں، اقوام متحدہ

دمشق(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔2 جنوری۔2015ء)شام میں سال 2014ء کے دوران خانہ جنگی کے نتیجے میں چھہتر ہزار سے زیادہ افراد مارے گئے ہیں۔ان میں ایک بڑی تعداد شامی فوج کے فضائی حملوں میں ماری گئی ہے۔برطانیہ میں قائم شامی آبزرویٹری برائے انسانی حقوق نے جمعرات کو شام میں تشدد کے واقعات میں ہلاکتوں کے یہ اعدادوشمار جاری کیے ہیں اور بتایا ہے کہ خانہ جنگی کا شکار ملک میں گذشتہ سال مرنے والوں میں 33278 شہری شامل ہیں۔

اقوام متحدہ کی جانب سے اگست 2014ء میں جاری کردہ اعداد وشمار میں بتایا گیا تھا کہ شام میں مارچ 2011ء سے جاری تنازعے کے نتیجے میں ایک لاکھ اکانوے ہزار سے زیادہ افراد مارے گئے تھے۔تاہم انسانی حقوق کی تنظیموں کا کہنا ہے کہ صدر بشارالاسد کی وفادار فوج اور باغی جنگجووٴں کے درمیان لڑائی میں مرنے والوں کی تعداد کہیں زیادہ ہے۔شام

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

02-01-2015 :تاریخ اشاعت

:متعلقہ عنوان