آپریشن ضرب عضب کامیاب ہوا ہے تو فوجی عدالتوں میں توسیع کا معمولی جواز بھی نہیں ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 11/01/2017 - 20:36:47 وقت اشاعت: 11/01/2017 - 20:36:47 وقت اشاعت: 11/01/2017 - 22:04:53 وقت اشاعت: 11/01/2017 - 22:04:50 وقت اشاعت: 11/01/2017 - 22:04:48 وقت اشاعت: 11/01/2017 - 22:04:46 وقت اشاعت: 11/01/2017 - 22:02:52 وقت اشاعت: 11/01/2017 - 22:02:51 وقت اشاعت: 11/01/2017 - 22:02:50 وقت اشاعت: 11/01/2017 - 22:02:49 وقت اشاعت: 11/01/2017 - 22:02:48
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

اسلام آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:05 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:06 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:09 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:16 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:11:11 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:11:13 اسلام آباد کی مزید خبریں

آپریشن ضرب عضب کامیاب ہوا ہے تو فوجی عدالتوں میں توسیع کا معمولی جواز بھی نہیں رہ جاتا ،چیئرمین سینیٹ نے فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع کی کوششوں کو حکومتی تضاد قراردیدیا

ایوان میں فوجی عدالتوں کی مدت میں مزید توسیع کے حکومتی فیصلہ کی اپوزیشن کی سب سے بڑی جماعت کی طرف سے شدید مخالفت , حکومت نے یقیناً فوجی عدالتوں کی مدت ختم ہونے پر کیسز انسداد دہشتگردی اور دیگر عدالتوں میں بھجوا دیے گئے ہوں گے اور وہی عدالتیں ان پر کام کر رہی ہوں گی، فرحت اللہ بابر

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 جنوری2017ء)چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے سینیٹ اجلاس کے دوران واضح کیا آپریشن ضرب عضب کامیاب ہوا ہے تو فوجی عدالتوں میں توسیع کا معمولی جواز بھی نہیں رہ جاتا۔انھوں نے فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع کی کوششوں کو حکومتی تضاد قراردیدیا۔ رضا ربانی نے واضح کیا ہے کہ آپریشن ضرب عضب کی کامیابی پر کیا ان عدالتوںکا کیا کوئی جواز رہ گیا ہے اس امر کا اظہار انھوں نے بدھ کو سینیٹ اجلاس کی کاروائی کے دوران کیا۔

ایوان میں فوجی عدالتوں کی مدت میں مزید توسیع کے حکومتی فیصلہ کی اپوزیشن کی سب سے بڑی جماعت کی طرف سے شدید مخالفت کی گئی ہے سنیٹر فرحت اللہ بابر نے نکتہ اعتراض پر کہا کہ حکومت نے یقیناً فوجی عدالتوں کی مدت ختم ہونے پر کیسز انسداد دہشتگردی اور دیگر عدالتوں میں بھجوا دیے گئے ہوں گے اور وہی عدالتیں ان پر کام کر رہی ہوں گی اجلاس میں چیئرمین سینیٹ نے بھی واضح کیا کہ اس میں تو کوئی دو رائے نہیں ہو سکتی یقیناً فوجیعدالتو ںسے کیسز متعلقہ عدالتوں کو جا چکے ہوں گے فرحت اللہ بابر نے کہا کہ فوجی عدالتوں کے قیام کا مقصد ،،جیٹ بلیک (انتہائی خطرناک )دہشتگردوں کو کیفر

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

11/01/2017 - 22:04:46 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان