ٹھٹھہ ،پولیو مہم متنازع ہوگئی، قطرے پلانے کے باوجود 6بچوں میں پولیس ظاہر ہوگیا، ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ نومبر

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:18:11 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:18:09 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:18:03 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:18:00 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:11:53 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:11:50 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:11:48 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:11:45 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:07:42 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:07:41 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:07:41
پچھلی خبریں - مزید خبریں

ٹھٹھہ

ٹھٹھہ ،پولیو مہم متنازع ہوگئی، قطرے پلانے کے باوجود 6بچوں میں پولیس ظاہر ہوگیا، گائوں میں خوف وہراس، قطرے پلانے سے انکار کردیا

ٹھٹھ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء) ٹھٹھ میں پولیو مہم متنازع ہوگئی۔ پولیو کے قطرے پلانے کے باوجود ایک ہی گاؤں کے چھ بچوں کوپولیو ظاہر ہونے کے بعد گاؤں کو لوگوں میں شدید خوف وہراس گاؤں کے مکینوں نے پولیو کے قطرے پلانے سے صاف انکارکردیا جبکہ سول انتظامیہ گاؤں کے چھ معصوم بچوں میں پولیو کی بیماری ظاہر ہوجانے کے باوجود گاؤں کے مکینوں کو مطئمن کرنے میں مکمل ناکام ہوگئی، پولیو ٹیم مقامی پولیس کے مدد سے زبردستی پولیو مہم جاری رکھنے پر مجبور ہوگئی ہے اس سلسلے میں این این آئی کو ملنے والی تفصیلات کے مطابق ٹھٹھ کے قریب ضلعی ہیڈکوارٹر مکلی کے مقام پر موجود گاؤں محمد سومار خاصخیلی میں جاری پولیو مہم کے دوران پولیو کے قطرے پلانے کے باوجود چھ معصوم بچے پولیو کا شکار بن چکے ہیں جن میں سے ایک بچہ ہلاک بھی ہوچکا ہے جبکہ دیگر پانچ معصوم بچوں میں آصیہ بنت عبدالکریم پانچ سالہ، اجیت بنت حسین خاصخیلی چھ سالہ، سیمہ بنت محمد امین بھی شامل ہیں مذکورہ بچوں کو پولیو قطرے پلانے کے بعد پولیو کی بیماری کی تصڈیق ہونے کے بعد گاؤں کے تمام

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/11/2016 - 22:11:50 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان