وزیر خزانہ سے آل ٹیچرز وفد کی ملاقات،اساتذہ کو ٹیچنگ الائونس دینے کا فیصلہ۔
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ نومبر

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:11:31 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:07:48 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:07:45 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:07:42 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:07:42 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:07:42 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:04:12 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:04:07 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:03:55 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:03:48 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 22:01:00
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

پشاور شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 18/01/2017 - 13:18:22 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 17:25:13 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 17:51:32 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 17:51:44 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 17:59:23 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 17:59:23 پشاور کی مزید خبریں

وزیر خزانہ سے آل ٹیچرز وفد کی ملاقات،اساتذہ کو ٹیچنگ الائونس دینے کا فیصلہ۔

پشاور۔16نومبر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء)خیبر پختونخوا حکومت نے ڈاکٹروں اور پیرامیڈیکس کو دئیے جانیوالے ہیلتھ الائونس کی طرز پر اساتذہ کو بھی ٹیچنگ الائونس دینے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ تدریسی عملہ دلجمعی سے بچوں کو پڑھائے اور تعلیمی ایمرجنسی کے تحت شرح خواندگی بڑھانے اور معیار تعلیم کو ہنگامی بنیادوں پر بہتر بنانے کے اہداف حاصل کئے جاسکیں اس بات کا انکشاف وزیر خزانہ مظفر سید ایڈوکیٹ نے آل پرائمری ٹیچرز ایسوسی ایشن کے نمائندہ وفد سے ملاقات میں کیا جس نے ایسوسی ایشن کے صوبائی صدر ملک خالد خان کی زیرقیادت ان سے دفتر سول سیکرٹریٹ پشاور میں ملاقات کی اور دس نکات پر مبنی اپنے بعض مسائل و مطالبات سے انہیں اگاہ کیا وفد میں تنظیم کے چئیرمین ابراہیم شاہ بابا، جنرل سیکرٹری بادشاہ محمود اور صوبائی ترجمان عزیزاللہ خان کے علاوہ اساتذہ کے مختلف اضلاع کے عہدیدار بھی شامل تھے جن کا شکوہ تھا کہ صوبائی حکومت نے تعلیمی ایمرجنسی تو لگا دی مگر اساتذہ کو ترقیافتہ ممالک کی طرح بہتر اجرت اور اونچا مقام دینے کا اعلان ہنوز تشنہ رہا وزیر خزانہ نے اساتذہ برادری کو مژدہ سناتے ہوئے بتایا کہ صوبائی حکومت نہ صرف انہیں تدریسی الائونس اور ٹائم سکیل فامولہ سمیت کئی مراعات دینے بلکہ تمام سرکاری ملازمین کی تنخواہیں عالمی معیار کے مطابق ہزار گنا بڑھانے سے کافی پہلے اصولی اتفاق بلکہ فیصلہ کر چکی ہے تاہم وسائل کی کمی ہمارے آڑے آرہی ہے ہماری کوشش ہے کہ یہ اہداف بتدریج پورے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/11/2016 - 22:07:42 :وقت اشاعت