شمالی راکھین کے حالات پر تشویش ہے، کوفی عنان
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ نومبر

مزید بین الاقوامی خبریں

وقت اشاعت: 16/11/2016 - 23:21:49 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 23:21:47 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 23:02:19 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 23:02:14 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 21:17:47 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 21:18:19 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 21:18:16 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 21:18:14 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 21:18:10 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 21:08:10 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 21:08:08
- مزید خبریں

شمالی راکھین کے حالات پر تشویش ہے، کوفی عنان

راکھین (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء)اقوام متحدہ کے سابق سیکرٹری جنرل کوفی عنان نے میانمار کی ریاست راکھین میں جاری پرتشدد واقعات پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے۔ کوفی عنان نے میانمار میں فوری طور پر خون ریزی روکنے کا مطالبہ کیا ہے۔ ان کا یہ بیان راکھین کے دارالحکومت ستوے میں مقامی حکام سے ملاقات کے بعد سامنے آیا۔ کوفی عنان اٴْس سات رکنی بین الاقوامی کمیشن کے سربراہ بھی ہیں، جو راکھین کے حالات کے تناظر میں بنایا گیا ہے۔ اقوام متحدہ کے ایک رابطہ دفتر کے مطابق حالیہ کشیدگی کے باعث راکھین میں 15 ہزار افراد بے گھر ہوئے ہیں جب کہ ڈیڑھ لاکھ سے زائد افراد انسانی بنیادوں پر امداد کے منتظر ہیں۔
16/11/2016 - 21:18:19 :وقت اشاعت