ترک صدر کے خطاب کے موقع پر تحریک انصاف کا مشترکہ اجلاس کا بائیکاٹ منفی روش اورقابل ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ نومبر

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 16/11/2016 - 20:50:58 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 19:50:35 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 20:21:08 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 19:45:18 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 20:21:02 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 20:21:00 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 20:20:56 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 20:20:52 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 20:20:50 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 20:15:13 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 20:14:52
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

پشاور شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 18/01/2017 - 13:18:22 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 17:25:13 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 17:51:32 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 17:51:44 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 17:59:23 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 17:59:23 پشاور کی مزید خبریں

ترک صدر کے خطاب کے موقع پر تحریک انصاف کا مشترکہ اجلاس کا بائیکاٹ منفی روش اورقابل مذمت روایت ہے ،جب بھی پاکستان کیلئے خوشی کاموقع ہوتاہے توتحریک انتشارکواحتجاج کادورہ پڑجاتاہے،کہ پاکستان اورترکی کے مابین دیرینہ،باہمی اعتماداورخلوص کے تعلقات ہیں، دونوں اسلامی اوربرادرانہ رشتوںمیںساتھ ساتھ چلتے آئے ہیں ، ترک صدرطیب اردوان ترقی میںعوامی انقلاب کے بعدپہلادورے پر پاکستان آرہے ہیں

وزیراعظم کے مشیرانجینئرامیرمقام کا پریس کانفرنس سے خطاب

پشاور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء)وزیراعظم کے مشیرانجینئرامیرمقام نے کہاہے کہ پاکستان اورترکی کے مابین دیرینہ،باہمی اعتماداورخلوص کے تعلقات ہیں، دونوں اسلامی اوربرادرانہ رشتوںمیںساتھ ساتھ چلتے آئے ہیں ، ترک صدرطیب اردوان ترقی میںعوامی انقلاب کے بعدپہلادورے پر پاکستان آرہے ہیںاورپارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرینگے مگرتحریک انتشارنے اپنی منفی روش کوایک بارپھردہراتے ہوئے اس مشترکہ اجلاس کے بائیکاٹ کی قابل مذمت روایت قائم کی ہے ، یہ پہلی بار نہیںشواہد ثابت کرتے ہیںکہ جب بھی پاکستان کیلئے خوشی کاموقع ہوتاہے توتحریک انتشارکواحتجاج کادورہ پڑجاتاہے،جشن آزادی کے ماہ میں انہوںنے احتجاج کی منفی روایت قائم کی،عزیزدوست چین کے صدرمنتخب ہونے کے بعدپہلی بارجب پاکستان آرہے تھے تواس وقت بھی اس جماعت کودھرنے کابوت چڑھ گیاتھا۔

وہ بدھ کو پشاورپریس کلب میںپریس کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے ۔انجینئرامیرمقام نے کہاکہ بھارتی مظالم کے نتیجے میںمقبوضہ کشمیرکے حریت پسند عوام اپنی جانیںقربان کررہیںتھے ،اس غم کی گھڑی میںکشمیریوںکیساتھ یکجہتی کیلئے منعقدہ پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس کابائیکاٹ کرنے والے صرف پی ٹی آئی تھی جس کے قائدین نے اس متفقہ قومی مسئلہ پرقوم کے ایک موقف کوتقسیم دکھانے کی سازش کی جس پردشمن کوپراپیگنڈے کاموقع ملا۔

انہوںنے کہاکہ پاکستان خیبرپختونخواسمیت پورے ملک کے عوام سوال کررہے ہیںکہ پاکستان کی خوشی کاہرموقع تحریک انتشارکے سربراہ کوکیوںغمزدہ کردیتاہے، یہ انقلاب کے نام پرانتشارکی تبدیلی لائے ہیں،انکی سیاسی منافقت عوام کے سامنے آشکارہ ہوچکی ہے۔انہوںنے کہاکہ پی ٹی آئی کے چیئرمین کوتنخواہیںاورمراعات تواچھی لگتی

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/11/2016 - 20:21:00 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان