بھٹ شاہ میں نئی نسل کو شاہ صاحب کی شاعری کی روحانی اور حقیقی پہلوئوں سے روشناس ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ نومبر

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 16/11/2016 - 19:07:41 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 19:07:39 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 19:07:36 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 19:07:35 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 19:07:32 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:57:21 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:57:17 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:52:33 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:52:33 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:52:33 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:21:09
پچھلی خبریں - مزید خبریں

حیدرآباد

حیدرآباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 19/01/2017 - 19:54:49 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 19:54:51 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 19:55:01 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 20:47:15 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 20:47:17 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 20:47:18 حیدرآباد کی مزید خبریں

بھٹ شاہ میں نئی نسل کو شاہ صاحب کی شاعری کی روحانی اور حقیقی پہلوئوں سے روشناس کرانے کیلئی سٹیج ڈرامے

حیدرآباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء) محکمہ ثقافت سندھ کی جانب سے حضرت شاہ عبداللطیف بھٹائی ؒکے 273ویں عرس مبارک کے موقع پر آڈیٹوریم ہال بھٹ شاہ میں نئی نسل کو شاہ صاحب کی شاعری کی روحانی اور حقیقی پہلوئوں سے روشناس کرانے کیلئے ایک اسٹیج ڈرامے کا انعقاد کیا گیاڈرامہ شاہ صاحب کی شاعری کے سر سورٹھ جوکہ گرناڑ کے بادشاہ رائے ڈیاچ اور انکی رانی سورٹھ کے عشق اور قربانی پر مشتمل ہے جسے سندھ کے نامور مصنف آغا سلیم کی جانب سے ڈرامائی تشکیل دی گئی شاہ صاحب کی شاعری کے مجموعے کا ہر ایک لفظ مقصد اور معنیٰ سے سرشار ہے اسی طرح ان کی شاعری کے سر سورٹھ کے ذریعے شاہ صاحب نے سورٹھ اور رائے ڈیاچ کی قربانی ، عشق اور موسیقی سے محبت کے احساس کو جن الفاظ سے خراج عقیدت پیش کیا ہے کو آسان طریقے سے عام فہم لوگوں کیلئے پیش کردہ س اسٹیج ڈرامے میں ریاض

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/11/2016 - 18:57:21 :وقت اشاعت