پاکستان کاروبار کیلئے بہت بڑی مارکیٹ ہے، فرانس باہمی تجارت کو فروغ دینے میں گہری ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ نومبر

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:57:05 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:57:02 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:52:33 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:52:33 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:52:33 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:52:33 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:52:33 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:52:30 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:52:29 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:47:31 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 18:47:27
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

پاکستان کاروبار کیلئے بہت بڑی مارکیٹ ہے، فرانس باہمی تجارت کو فروغ دینے میں گہری دلچسپی رکھتا ہے، فرانس تجارتی و اقتصادی تعلقات کیلئے چین کے بعد اب فرانس تجارتی تعلقات کیلئے جنوبی ایشیائی خطہ کی طرف زیادہ توجہ دے رہا ہے

فرانس کے ریجنل اکنامک ڈیپارٹمنٹ برائے جنوبی ایشیاء کے سربراہ جین مارک فی نیٹ کا اسلام آباد چیمبر آف کامرس میں خطاب

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء) فرانس کے ریجنل اکنامک ڈیپارٹمنٹ برائے جنوبی ایشیاء کے سربراہ جین مارک فی نیٹ نے کہا ہے کہ پاکستان کاروبار کیلئے بہت بڑی مارکیٹ ہے اور فرانس اس کے ساتھ باہمی تجارت کو فروغ دینے میں گہری دلچسپی رکھتا ہے، فرانس تجارتی و اقتصادی تعلقات کیلئے چین پر زیادہ توجہ مرکوز کئے ہوئے تھا جس کی وجہ سے جنوبی ایشیاء نظر انداز ہوتا رہا لیکن اب فرانس تجارتی تعلقات کیلئے جنوبی ایشیائی خطہ کی طرف زیادہ توجہ دے رہا ہے، پاکستان جنوبی ایشیاء کی ایک اہم اور پرکشش مارکیٹ ہے لہذا فرانس پاکستان کے ساتھ تجارتی تعلقات کے فروغ کو خصوصی اہمیت دیتا ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں تاجر برادری سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ فرانسیسی سفارتخانہ کے اکنامک ڈیپارٹمنٹ کے ہیڈ فیلپ فوئٹ بھی اس موقع پر ان کے ہمراہ تھے۔ جین مارک فی نیٹ نے کہا کہ سی پیک منصوبے کی وجہ سے پاکستان کی مارکیٹ میں فرانس کی دلچسپی میں اضافہ ہوا ہے کیونکہ اس منصوبے سے پاکستان میں کاروبار و سرمایہ کاری کے نئے مواقع پیدا ہوں گے۔

انہوں نے کہا کہ کاروبار کا فروغ باہمی تعلقات کو فروغ دینے کا سب سے بہترین ذریعہ ہے اور اس امید کا اظہار کیا کہ باہمی تجارت کے بہتر ہونے سے فرانس اور پاکستان کے درمیان مضبوط تعلقات قائم ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ فرانس کے پاس جدید ٹیکنالوجی اور اعلیٰ مہارت موجود ہے اور پاکستان فرانس کے ساتھ مختلف شعبوں میں تعاون کو فروغ دے کر اپنی معیشت کیلئے فائدہ مند نتائج حاصل کر سکتا ہے۔

برطانیہ کے یورپی یونین سے انخلا کے معاملے پر تبصرہ کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ برطانیہ یورپ میں داخلے کیلئے ایک گیٹ کا درجہ رکھتا ہے تاہم انہوں نے کہا کہ یورپ سے نکلنے کے فیصلہ سے برطانیہ خود متاثر ہو سکتا ہے لیکن فرانس سمیت یورپی ممالک پر زیادہ فرق نہیں پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ وہ سال میں دو دفعہ پاکستان کا دورہ کیا کریں گے تا کہ دونوں ممالک کو تجارتی و اقتصادی شعبوں میں مزید قریب لانے کیلئے اپنا کردار ادا کر سکیں۔

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/11/2016 - 18:52:33 :وقت اشاعت