مسئلہ کشمیر پیچیدہ ضرور ہے لیکن اس کا پر امن حل ناممکن نہیں ‘ بھارت رقبہ اور آبادی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ نومبر

مزید کشمیر کی خبریں

وقت اشاعت: 16/11/2016 - 17:11:22 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 17:11:16 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 17:11:12 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 17:11:11 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 17:11:08 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 17:11:07 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 17:11:03 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 17:11:02 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 17:11:01 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:55:17 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:53:58
پچھلی خبریں - مزید خبریں

مسئلہ کشمیر پیچیدہ ضرور ہے لیکن اس کا پر امن حل ناممکن نہیں ‘ بھارت رقبہ اور آبادی کے لحاظ سے بڑا ملک ضرور ہے لیکن کشمیری قوم اس کی طاقت اور اثر و سوخ سے ہر گز مرعوب نہیں ہو گی‘ گزشتہ صدی میں اس سے کئی گنا بڑی طاقتیںجن کی سرحدوں کے اندر سورج غروپ نہیں ہوتا یا تو صفہ ہستی سے مٹ گئیں یا پھر سکڑ کر چھوٹے سے ملک تک محدود ہو چکی ہیں

صدر آزاد جموں و کشمیر سردار محمد مسعود خان کا عشائیہ سے خطاب

راولاکوٹ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء) صدر آزاد جموں و کشمیر سردار محمد مسعود خان نے کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر پیچیدہ ضرور ہے لیکن اس کا پر امن حل ناممکن نہیں ۔ بھارت رقبہ اور آبادی کے لحاظ سے بڑا ملک ضرور ہے لیکن کشمیری قوم اس کی طاقت اور اثر و سوخ سے ہر گز مرعوب نہیں ہو گی ۔ گزشتہ صدی میں اس سے کئی گنا بڑی طاقتیںجن کی سرحدوں کے اندر سورج غروپ نہیں ہوتا یا تو صفہ ہستی سے مٹ گئیں یا پھر سکڑ کر چھوٹے سے ملک تک محدود ہو چکی ہیں۔

کشمیری بھارتی ہندووں سے زیادہ قابل ذہین اور بہادر ہیں۔ اس لیے ہمیں مایوس نہیں ہونا چاہیے ۔ بے بسی ، مایوسی ، اور احتجاج کی سیاست کو امید ، حوصلے اور جرات کی سیاست سے بدلیں گے ۔ ہمیں پختہ یقین اور مصمم ارادے کے ساتھ آزادی کی جدوجہد کرنا ہو گی ۔ ہندوستان کشمیری قوم کو مسئلہ کشمیر کا فریق ہی نہیں سمجھتا ۔ پاکستان نے اس سلسلے پر بات کرنے سے پہلے ہمیشہ کشمیریوں کو اعتماد میں لیا ہے ۔

اقوام متحدہ بڑی طاقتوں کے زیر اثر ہے لیکن ہم اس کا دروازہ با ر بار کھٹکھٹائیں گے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز یہاں اپنے اعزاز میں آزاد کشمیر سوسائٹی فارنیشنل اینڈ سوشل ریفارمز کی طرف سے دئیے گئے عشائیے کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر سوسائٹی کے ممبران ،ریٹائرڈ سیکرٹری صاحبان، ماہرین تعلیم ، وکلاء ، ماہرین طب ، صحافیوں ، تاجروں اور علماء و مشائخ کی بڑ ی تعداد موجود تھی ۔

قبل ازیں مقررین صدر تقریب عبدالخالق ایڈووکیٹ ، پروفیسر خضر حیات ، سردارخورشید ، ڈاکٹر محمود خان ، ڈاکٹر واجد علی ، سردار رزاق ، مفتی عبدالخالق ، اور دیگر نے راولاکوٹ میںپانی کی قلت ، گوئیں نالہ روڈ کی خستہ حالی ، پونچھ ڈویژن میں تعلیمی بورڈ کے قیام ، سٹی ڈویلپمنٹ پراجیکٹس کی عدم تکمیل ، آزاد کشمیر میں گرتا ہوا معیار تعلیم ، لڑکوں اور لڑکیوں کی شرح خواندگی میں عدم توازن ، یونیورسٹیوں کے معاملات پونچھ

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/11/2016 - 17:11:07 :وقت اشاعت