پاکستانی پرانے بڑے سائز کے نوٹ 30 نومبر2016 تک کمرشل بینکوں میںواپس ہوسکتے ہیں،سٹیٹ ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ نومبر

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:44:47 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:43:05 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:43:05 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:43:05 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:39:55 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:43:02 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:26:41 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:21:38 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:39:34 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:37:44 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 16:37:41
پچھلی خبریں - مزید خبریں

فیصل آباد

پاکستانی پرانے بڑے سائز کے نوٹ 30 نومبر2016 تک کمرشل بینکوں میںواپس ہوسکتے ہیں،سٹیٹ بنک

گندے نوٹوں کا لین دین کرنے والے بینکوں پر چھاپے مارے جا رہے ہیں،بنک ٹریثرری احمدحیات خان کا تقریب سے خطاب

فیصل آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء) پاکستانی پرانے بڑے سائز کے نوٹوں 10روپے سے لے کر ایک ہزار روپے والے 30 نومبر2016 تک کمرشل بینکوں میںواپس ہوسکتے ہیں جبکہپھٹے پرانی(گندی) نوٹوں کا لین دین کرنے والے بینکوں کی متعلقہ برانچ کو 5 ہزار روپے کا جرمانہ کیا جائے گا آن لائن کے مطابق اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے سنیئر آفیسر ٹریژری احمد حیات خاں نے سٹیٹ بینک آف پاکستان کی طرف سے فیصل آباد چیمبر میں-․-( روپے کو پہچانو )کے موضوع پر منعقدہ تقریب میںپاکستانی کرنسی نوٹوں کے سیکورٹی فیچر ز کی وضاحت کرتے ہوئے بتایا کہ گندے نوٹوں کا لین دین کرنے والے بینکوں پر چھاپے مارے جا رہے ہیں اور گندا نوٹ ملنے پرمتعلقہ برانچ کو 5 ہزار روپے کا جرمانہ بھی کیا جاتا ہے ۔

انہوں نے مزید بتایا کہ اگرچہ 30 نومبر2016 تک کمرشل بینک پرانے نوٹ واپس لے سکتے ہیں مگر سٹیٹ بینک میںیہ سہولت 2021 تک دی جائے گی ۔ فیصل آباد چیمبر آف کامرس اینڈانڈسٹری کے صدر انجینئر محمد سعید شیخ نے کہا کہ پاکستان کے کرنسی نوٹوں کی حرمت کو برقرار رکھنے اور لوگوں کو جعلی نوٹوں کے بارے میں معلومات دینے کیلئے وسیع پیمانے پر آگاہی تقریبات کا انعقاد ضروری ہے ۔

اس وقت ملک بھر میں بڑی تعداد میں کرنسی نوٹ سرکولیشن میں ہیں جبکہ پاکستان میں ہر قسم کا لین دین انہی نوٹوںکے ذریعے ہوتا ہے۔ انہوں

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/11/2016 - 16:43:02 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان