ٹرمپ صدارت سنبھالنے کے بعد اہم قوانین منسوخ کرسکتے ہیں،تجزیہ کا روں کا دعویٰ
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ نومبر

مزید بین الاقوامی خبریں

وقت اشاعت: 16/11/2016 - 13:11:11 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 12:53:05 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 12:21:00 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 12:20:07 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 12:20:05 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 12:20:03 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 12:20:01 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 12:20:00 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 12:03:33 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 12:03:31 وقت اشاعت: 16/11/2016 - 11:51:00
پچھلی خبریں - مزید خبریں

ٹرمپ صدارت سنبھالنے کے بعد اہم قوانین منسوخ کرسکتے ہیں،تجزیہ کا روں کا دعویٰ

واشنگٹن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء)ڈونلڈ ٹرمپ منصب صدارت سنبھالنے کے بعد ڈونلڈ ٹرمپ کئی اہم قوانین کو منسوخ کرسکتے ہیں۔نو منتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ آئندہ سال 20 جنوری کو اپنے عہدے کا حلف اٹھائیں گے۔ ٹرمپ کے امریکی صدر منتخب ہونے پر دنیا بھر میں حیرت اور تشویش کا اظہار کیا گیا تو وہیں خود امریکا میں بھی اس حوالے سے خدشات اور تحفظات پائے جاتے ہیں۔

سیاسی تجزیہ کاروں کے مطابق ڈونلڈ ٹرمپ کے منصب صدارت پر آنے کے بعد وہ صدر اوباما کے دور میں کیے گئے بہت سے فیصلے اور معاہدے منسوخ اپنے قلم کی ایک جنبش سے ختم کرسکتے ہیں۔ان منصوبوں اور معاہدوں میں اوباما ہیلتھ کیئر پروگرام ، صارف کے تحفظ کا پروگرام اور

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/11/2016 - 12:20:03 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان