حکومت پاورسیکٹر میں سرمایہ کاری کررہی ہے،2018ء تک لوڈشیڈنگ ختم ہوجائے گی، سی ای ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل نومبر

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:55:58 وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:55:58 وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:55:58 وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:55:58 وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:55:58 وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:55:58 وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:53:19 وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:53:18 وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:53:17 وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:53:17 وقت اشاعت: 15/11/2016 - 22:53:17
پچھلی خبریں - مزید خبریں

ملتان

حکومت پاورسیکٹر میں سرمایہ کاری کررہی ہے،2018ء تک لوڈشیڈنگ ختم ہوجائے گی، سی ای اومیپکو

ملتان ۔15نومبر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 نومبر2016ء) چیف ایگزیکٹو آفیسر میپکو انجینئر مسعود صلاح الدین نے کہا ہے کہ میپکو قومی مفاد میں بجلی چوروں کیخلاف مہم چلارہی ہے ، بجلی ملک و ایماندار صارفین کا قیمتی اثاثہ اور ہم اس کے رکھوالے ہیں،حکومت پاورسیکٹر میں اربوں روپے کی سرمایہ کاری کررہی ہے،2018ء تک لوڈشیڈنگ ختم ہوجائے گی اور میپکو اپنے ڈسٹری بیوشن سسٹم کی استعداد اپنے صارفین کی ضروریات کے مطابق بڑھائے گی جس سے وولٹیج کی کمی اور اوورلوڈنگ کا خاتمہ ہوجائیگا ، وہ میپکو ہیڈ کوارٹر میں میڈیا سے گفتگو کررہے تھے ، انہوں نے کہا کہ میپکو ملک کی سب سے بڑی ڈسٹری بیوشن کمپنی ہے اور 54لاکھ سے زائد صارفین کو خدمات مہیاکررہی ہے ، حکومتی پالیسی کے مطابق جلد ہی نیٹ میٹرنگ کے ذریعے صارفین کی شمسی توانائی کے ذریعے پیداکی گئی اضافی بجلی خریدیں گے ،انہوں نے کہا کہ میپکو میں خراب میٹروں کی تبدیلی کا عمل جاری ہے ہر خراب میٹر کا ڈیٹاچیک کیاجارہاہے تاکہ اس پر چوری کے شواہد ملیں تو جرمانہ کیاجاسکے ، چیف ایگزیکٹو آفیسر نے کہا کہ میپکو میں گھریلو صارفین کی تعداد 48لاکھ48ہزار746 ہے اور رواں مالی سال 2016-17ء کے ابتدائی چار ماہ میں بجلی چوری کرنیوالے صارفین کو 5کروڑ49لاکھ یونٹس چوری کرنے پر 53کروڑ66لاکھ روپے جرمانہ عائد کیاگیا اور 33کروڑروپے سے زائد رقم وصول کرکے قومی خزانے میں جمع کروائی گئی جبکہ میپکو نے 1102صارفین کیخلاف بجلی چوری کے الزام میں مقدمات کے اندراج

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

15/11/2016 - 22:55:58 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان