پاکستان وافغانستان میں داعش کے سربراہ حافظ سعید ڈرون حملے میں ہلاک
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ اگست

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:50:55 وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:50:55 وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:49:26 وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:45:59 وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:38:07 وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:38:07 وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:36:07 وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:35:44 وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:29:15 وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:29:15 وقت اشاعت: 13/08/2016 - 11:29:02
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پاکستان وافغانستان میں داعش کے سربراہ حافظ سعید ڈرون حملے میں ہلاک

واشنگٹن (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔13 اگست ۔2016ء)امریکہ نے تصدیق کی ہے کہ پاکستان اور افغانستان میں خود کو دولت اسلامیہ کہلانے والی شدت پسند تنظیم کے رہنما حافظ سعید خان گذشتہ ماہ ایک امریکی ڈرون حملے میں مارے جا چکے ہیں۔اس سے قبل گذشتہ سال افغان خفیہ ایجنسی کا کہنا تھا کہ ان کے خیال میں حافظ سعید افغانستان کے مشرقی صوبے ننگرہار میں ڈرون حملے کے نتیجے میں ہلاک ہوگئے تھے۔

تاہم دولت اسلامیہ کا کہنا تھا کہ ان رہنما اس حملے میں بچ گئے تھے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق امریکی وزارت دفاع کے ایک اہلکار نے برطانوی نشریاتی ادارے کو بتایا کہ حافظ سعید گذشتہ ماہ 26 جولائی کو ایک تازہ ڈرون حملے میں ہلاک ہوگئے ہیں۔اہلکار نے بتایا کہ حافظ سعید خان کو ننگرہار کے ضلع اچن میں مارا گیا ہے۔یہ ڈرون حملہ دولت اسلامیہ کی جانب سے افغانستان میں کیے جانے والے سب سے خطرناک حملے کے بعد کیا گیا

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

13/08/2016 - 11:38:07 :وقت اشاعت