لاہور،سروسزہسپتال میں ڈاکٹرپرمبینہ تشددکیخلاف ینگ ڈاکٹرزکی جانب سے اوپی ڈی بند
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ اگست

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 12/08/2016 - 22:14:39 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 22:06:51 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 21:58:53 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 21:52:38 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 21:52:11 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 21:37:44 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 21:37:44 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 21:36:12 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 21:36:12 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 21:36:12 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 21:34:30
پچھلی خبریں - مزید خبریں

لاہور

لاہور،سروسزہسپتال میں ڈاکٹرپرمبینہ تشددکیخلاف ینگ ڈاکٹرزکی جانب سے اوپی ڈی بند

رات قیدی کاچیک اپ کرانے کیلئے آئے پولیس اہلکاروں نے ڈاکٹرپرتشددکیا،ایم ایس نے پولیس کاساتھ دیتے ہوئے معاملہ کودباناچاہالیکن خاموش نہیں بیٹھیں گے،ایم ایس کواستعفیٰ دیناپڑے گا،ینگ ڈاکٹرزکاموٴقف

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔12 اگست ۔2016ء) سروسز ہسپتال میں ڈاکٹر پر مبینہ تشدد کے خلاف ینگ ڈاکٹرز نے او پی ڈی بند کردی اور پولیس گردی کے خلاف شدید نعرے بازی بھی کرتے رہے۔سروسز ہسپتال میں بدھ کی رات تقریباً 2بجے کے قریب قیدی کا چیک اپ کرانے کیلئے آئے پولیس اہلکاروں نے ڈاکٹر عمر وڑائچ کو نہ صرف گالیاں بھی دیں بلکہ ان پر تشدد بھی کیا۔

اسکی وجہ یہ بتائی جاتی ہے کہ ڈاکٹر نے انہیں خواتین کے وارڈ میں بیٹھنے سے منع کیا تھا۔جس پر پولیس نے انہیں تشدد کا نشانہ بنایا۔ڈاکٹر ز کا کہنا تھا کہ ایم ایس نے پولیس کا ساتھ دیتے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

12/08/2016 - 21:37:44 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان