دہشت گردی کے خاتمہ کیلئے نیشنل ایکشن پلان پر سختی سے عمل کرنا ہوگا،سید قائم علی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ اگست

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:41:27 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:34:21 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:33:50 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:33:50 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:33:50 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:32:00 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:32:00 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:32:00 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:28:59 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:28:59 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:25:34
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

دہشت گردی کے خاتمہ کیلئے نیشنل ایکشن پلان پر سختی سے عمل کرنا ہوگا،سید قائم علی شاہ

میری حکومت ،پارٹی نے نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کرکے دکھایا ،وکلا ، صحافیوں کے دکھ میں برابر کا شریک ہوں ،سابق وزیراعلیٰ سندھ , ٹارگٹ کلنگ، اغوا برائے تاوان اور دیگر جرائم پر کافی حد تک قابو پالیا گیا ہے،تاہم امجد صابری اور اویس علی شاہ کے واقعہ پر شرمندگی ہے،میڈیا سے گفتگو

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔12 اگست ۔2016ء) پاکستان پیپلزپارٹی کے سینئر رہنما اور سابق وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے کہا ہے کہ دہشت گردی کے خاتمہ کے لیے نیشنل ایکشن پلان پر سختی سے عمل کرنا ہوگا۔میری حکومت اور پارٹی نے نیشنل ایکشن پلان پر عمل درآمد کرکے دکھایا ہے۔ بلوچستان دہشت گردی ملکی تاریخ کا سنگین واقعہ ہے ۔ ملکی تاریخ میں کبھی اتنی بڑی تعداد میں وکلا کو نشانہ نہیں بنایا گیا ۔

وکلا اور صحافیوں کی شہادت پر ان کے دکھ میں برابر کا شریک ہوں ۔ وہ جمعہ کو مقامی اسپتال میں سانحہ کوئٹہ میں زخمی ہونے والوں کی عیادت اور سندھ ہائی کورٹ بار کے صدرسے سانحہ کوئٹہ میں شہید ہونے والے وکلا کی تعزیت کرنے کے بعد میڈیا سے گفتگو کررہے تھے ۔سید قائم علی شاہ نے کہاکہ نیشنل ایکشن پلان عملدرآمد سے ہی سندھ میں امن قائم ہوا ۔ میری حکومت نے قومی ایکشن پلان کے تحت سنگین مقدمات میں ملوث مجرموں کو گرفتار کیا ۔

دہشت گردی کو جڑسے اکھاڑنے کے لیے قومی ایکشن پلان پر سختی سے عمل کرنا ہوگا ۔انہوں نے کہا کہ سینٹ کی ٹکٹ کی پیشکش کی کوئی بات نہیں ۔ پارٹی ورکررہ کرکام کرتا رہوں گا ۔ ذوالفقار علی بھٹو کہتے تھے کہ پہلے ورکر ہوں پھر لیڈر ہم بھی اسی فلسفے پر عمل پیرا ہیں ۔ سید قائم علی شاہ نے کہا

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

12/08/2016 - 17:32:00 :وقت اشاعت