صہیونی توسیع پسندی کا اژدھا مقبوضہ بیت المقدس کو خاموشی کیساتھ نگل رہا ہے،خلیل ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ اگست

مزید بین الاقوامی خبریں

وقت اشاعت: 12/08/2016 - 19:06:55 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 19:06:55 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 19:06:55 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 19:05:29 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 19:05:29 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:03:27 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:03:27 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:02:22 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:02:22 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 17:02:22 وقت اشاعت: 12/08/2016 - 16:47:53
پچھلی خبریں - مزید خبریں

صہیونی توسیع پسندی کا اژدھا مقبوضہ بیت المقدس کو خاموشی کیساتھ نگل رہا ہے،خلیل تفکجی

مقبوضہ بیت المقدس(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔12 اگست ۔2016ء)فلسطین کے ممتاز دانشور یہودی توسیع پسندی کے امور کے ماہر خلیل تفکجی نے خبردار کیا ہے کہ صہیونی توسیع پسندی کا اژدھا مقبوضہ بیت المقدس کو خاموشی کیساتھ نگل رہا ہے۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خلیل تفکجی نے کہا کہ صہیونی ریاست کی اصل سازش مشرقی بیت المقدس کو مقبوضہ مغربی کنارے سے الگ تھلگ کرنا اور مشرقی بیت المقدس میں یہودی کالونیاں کا گڑھ بنانا ہے۔

یہی وجہ ہے کہ صہیونی ریاست نے 2020ء کیلئے ’عظیم تر القدس‘ کا جو منصوبے پیش کیا ہے اس کے تحت شہر مقدس میں 54 ہزار نئے مکانات کی تعمیر شامل ہے۔فلسطینی تجزیہ نگار نے کہاکہ اسرائیل کی طرف سے حالیہ ایام میں 770 نئے مکانات کی تعمیر، گیلو،

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

12/08/2016 - 17:03:27 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان