پاکستانی اداکاراوٴں کے درمیان لگژری گاڑیوں کی دوڑ
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات اگست

لاہور

پاکستانی اداکاراوٴں کے درمیان لگژری گاڑیوں کی دوڑ

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔11 اگست۔2016ء) امپورٹڈ میک اپ، جدید ملبوسات، زیورات اور سمارٹ موبائلز فون کے بعد فلم اور سٹیج کی اداکاراوٴں میں مہنگی اور لگڑری گاڑیاں رکھنا سٹیٹس سمبل بن گیا۔ اداکارائیں اپنی شخصیت کو دلکش اور جاذب نظر بنانے، اپنی شان وشوکت سے دھاک بٹھانے اور ایک دوسرے پر سبقت لے جانے کیلئے نت نئے حربے استعمال کرتی ہیں۔

اداکاراوٴں میں مہنگا میک اپ، سٹائلش ملبوسات اور نئے نئے زیورات کی نمود ونمائش کوئی نئی بات نہیں بلکہ اب بڑھتی ہوئی وارداتوں کے پیش نظر وہ زیورات کو لوگوں کی نظروں سے اوجھل رکھتی ہیں۔ تاہم موبائل فون کے کریز نے انہیں مہنگے ترین سیٹ لینے پر مجبور کر دیا ہے ہر دوسری اداکارہ کے پاس 50 ہزار سے دو لاکھ روپے تک کا موبائل سیٹ موجود ہے لیکن اب فنکاراوٴں میں مہنگی گاڑیاں خریدنے کی ایک نئی روایت نے جنم لیا ہے۔

اس دوڑ میں سٹیج اداکاراوٴں نے فلمی اداکاراوٴں کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔ تھیٹر کی تو بی کلاس اداکاراوٴں کو بھی بڑی گاڑیوں نے اپنی آغوش میں لے رکھا ہے۔ بلاشبہ سٹیج اداکاراوٴں کا معاوضہ پرکشش ہے لیکن کچھ اداکارائیں ایسی بھی ہیں جن کا معاوضہ تو کم ہے مگر ان کی شان وشوکت دوسروں سے کم نہیں ہے۔سب سے مہنگی گاڑیاں نرگس، ماہ نور، ندا چودھری اور ہنی شہزادی کے پاس

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

11/08/2016 - 12:14:10 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان