گنداخہ کوتحصیل کا درجہ ملنے کے باوجود سہولیات کا فقدان ،اعلیٰ افسران و دفاتر ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ اگست

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:55:33 وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:55:33 وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:54:06 وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:41:02 وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:41:02 وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:41:02 وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:39:59 وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:39:59 وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:19:20 وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:18:00 وقت اشاعت: 10/08/2016 - 17:18:00
پچھلی خبریں - مزید خبریں

گنداخہ کوتحصیل کا درجہ ملنے کے باوجود سہولیات کا فقدان ،اعلیٰ افسران و دفاتر شہر سے 40کلومیٹر دور

گنداخہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔10 اگست ۔2016ء)گنداخہ کو تحصیل کا درجہ ملنے کے باوجود مسائلستان بن چکا ہے شہری سخت پریشان۔تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم میر ظفراﷲ خان جمالی کی زاتی کوششوں کے بعد 2004میں گنداخہ کو تحصیل کا درجہ ملا اور بارہ سال کا لمبا عرصہ گزرنے کے باوجود گنداخہ میں کوئی سہولت میسر نہیں ہے یہاں تک کے گنداخہ تحصیل کے نام پر جتنے بھی سرکاری ادارے ہیں جن میں جوڈیشنل مجسٹریٹ،ڈی ایس پی آفس،ڈپٹی ڈاریکٹر زراعت آفس،ایس ڈی او محکمہ پبلک ہیلتھ انجینئرنگ ،ایس ڈی او ایریگیشن سمیت کئی دفتر گنداخہ میں ہونے کے بجائے چالیس کلومیٹر دور اوستہ محمد میں کام کررہے ہیں جس کی وجہ سے گنداخہ کے شہری دوہرے عذاب کا شکار ہیں پچاس پچاس کلومیٹر دور اوستہ محمدکا سفر کرکے ہزاروں روپے کا خرچہ کرکے اپنے کاغذات کے ایک دستخط کے لئے مارے مارے پھرتے ہیں،گنداخہ کے مسائل یہاں پر ختم نہیں ہوئے رہی سہی کسر محکمہ ایریگیشن ،سوئی سدرن گیس،واپڈا،بی اینڈ آرنے پوری کردی ایک سروے کے مطابق گنداخہ کے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

10/08/2016 - 17:41:02 :وقت اشاعت