پانی کی لیکیج اور چوری کو روکنے کے بعد 40 ہزارصارفین کو 24 گھنٹے اعلیٰ معیار کا پینے ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل اگست

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:55:42 وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:54:33 وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:42:22 وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:31:49 وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:29:56 وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:21:53 وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:21:53 وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:21:52 وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:20:12 وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:13:09 وقت اشاعت: 09/08/2016 - 19:10:32
پچھلی خبریں - مزید خبریں

فیصل آباد

فیصل آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 21/01/2017 - 12:06:19 وقت اشاعت: 21/01/2017 - 12:06:22 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 12:46:55 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 14:11:50 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 14:11:51 وقت اشاعت: 20/01/2017 - 14:11:52 فیصل آباد کی مزید خبریں

پانی کی لیکیج اور چوری کو روکنے کے بعد 40 ہزارصارفین کو 24 گھنٹے اعلیٰ معیار کا پینے والا پانی ملے گا، میاں عرفان منان

سائیں دی کھوئی کے مقام پر نیا پلانٹ لگا یا جائیگا جو آئندہ 3 سالوں میں مکمل ہو جائیگا،فیصل آباد کو کم از کم تین واٹر ٹریٹمنٹ پلانٹس کی ضرورت ہے، فیصل آباد چیمبر کے ممبران سے خطاب

فیصل آباد ( اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔9 اگست ۔2016ء) واسا اس وقت 6 گھنٹے پانی فراہم کر رہا ہے جبکہ پانی کی لیکیج اور چوری کو روکنے کے بعد 40 ہزارصارفین کو 24 گھنٹے اعلیٰ معیار کا پینے والا پانی ملے گا۔ یہ بات واس کے وائس چیئرمین میاں عرفان منان نے فیصل آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے ممبران سے خطاب کرتے ہوئے کہی ۔ انہوں نے بتایا کہ واسا فیصل آباد 160 ملین گیلن روزانہ کی ضروریات کے برعکس اس وقت 110 ملین گیلن پانی فراہم کر رہا ہے جبکہ گوگیرہ برانچ سے اڑھائی سے تین ہزار ملین گیلن مزید پانی فراہم کرنے کیلئے سائیں دی کھوئی کے مقام پر نیا پلانٹ لگا یا جائیگا جو آئندہ 3 سالوں میں مکمل ہو جائیگا۔

انہوں نے بتایا کہ واسافیصل آباد ملک کی پہلی یوٹیلیٹی ہوگی جس کی آئندہ 30 سے 35 سالوں کی ضروریات کو پورا کرنے کیلئے ماسٹر پلاننگ کی جا رہی ہے۔ اس مقصد کیلئے جاپان انٹرنیشنل کوآپریشن ایجنسی 45 ملین کی گرانٹ اِن ایڈ دے گی۔ انہوں نے کہا کہ واسا فیصل آباد فرانس کے ساتھ پرفارمنس بیسڈ کنٹریکٹ سائن کرے گا۔ یہ چالیس ملین ڈالر کا پراجیکٹ ہو گا جس کے تحت چوری اور لیک ہونے والے پانی کی بچت کرکے نئے صارفین کو پانی فراہم کیا جائیگا۔

انہوں نے کہا کہ بد قسمتی سے فیصل آباد میں گھریلو اور صنعتی گندے پانی کے نکاس کیلئے انتظامات کئے گئے ہیں مگر بارشی پانی کے نکاس کیلئے سڑکوں کے کنارے سٹارم واٹر چینل تو بنا دیئے گئے مگر ان کا نکاس نہیں ہے۔ تاہم اب الگ ڈرینج سسٹم کی بھی منصوبہ بندی کی جا رہی ہے۔ شیخوپورہ پر ڈرین کے بارے میں انہوں نے کہا کہ ایک مشکل منصوبہ ہے اس کی تکمیل کیلئے 14 اگست کی تاریخ دی گئی تھی مگر مون سون کی وجہ سے اس میں تاخیر ہو سکتی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ 7 چک میں فرنچ منصوبے کے تحت بوتلوں میں پانی فراہم کرنے کا بھی منصوبہ آزمائشی طور پر شروع ہے۔ 19 لٹر کی بوتل 50 روپے میں دی جا رہی ہے جبکہ ماہانہ 10 ہزار بوتلیں فروخت ہو رہی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ واسا عالمی معیار کا پانی دے رہا ہے مگر اس کے برعکس گھریلو صارفین سے اس کی ریکوری 21 فیصد ۔ کمرشل سے 41 جبکہ صنعتی صارفین سے ریکوری 90 فیصد ہے۔



اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

09/08/2016 - 19:21:53 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان