کراچی پولیس کو اس وقت20ہزار کی افرادی قوت کی کمی کا سامنا ہے،10 ہزار آسامیوں کی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر اگست

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 08/08/2016 - 21:14:53 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 21:14:53 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 21:07:14 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 21:06:59 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 21:05:45 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 21:05:45 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 20:50:55 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 20:48:45 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 20:48:27 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 20:43:07 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 20:43:07
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

کراچی پولیس کو اس وقت20ہزار کی افرادی قوت کی کمی کا سامنا ہے،10 ہزار آسامیوں کی سفارشات جلد وزیر اعلی کو بھیجی جائیں گی، آئی جی سندھ

مددگار 15 کو اندرون تین ماہ اپ گریڈ کردیا جائیگا،ٹریفک پولیس میں مذید 4700 افراد بھرتی کیئے جائیں گے، اے ڈی خواجہ کا کراچی چیمبرمیں خطاب

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔8 اگست ۔2016ء)آئی جی سندھ پولیس اﷲ ڈنوخواجہ نے کہاہے کہ کراچی پولیس کو اس وقت20ہزار کی افرادی قوت کی کمی کا سامنا ہے تاہم کم از کم10 ہزار آسامیوں کی پولیس میں بھرتی کے حوالے سے جلد ہی سفارشات وزیر اعلی سندھ کو منظوری کے لیئے بھیجی جائیں گی ۔پولیس کو ہدایات دی گئی ہیں کہ مددگار 15 کی اپ گریڈیشن اندرون تین ماہ کردی جائے جبکہ شہر میں نئے منتخب کردہ مقامات پر سی سی ٹی وی کیمروں کی تنصیب کے ساتھ ساتھ کیمروں کی ٹیکنیکی خرابیوں کو بھی مرمت کرنے کے اقدامات جاری ہیں ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیرکو کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریزکے دورے کے موقع پرتاجروصنعتکاروں سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ایڈیشنل آئی جی کراچی مشتاق احمد مہر کے علاوہ ویسٹ اور ساوُتھ زون کے ڈی آئی جیز بھی ان کے ہمراہ تھے ۔اس موقع پر کے سی سی آئی کے عہدیداران و ممبران نے ان کا استقبال کیا ۔آئی جی سندھ نے کہا کہ انہوں نے کہا کہ کراچی میں جرائم اور باالخصوص بھتہ پرچیوں کے واقعات میں نمایاں کمی آئی ہے اور شہر کی رونقیں بحال ہوگئی ہیں اور اس حوالے سے پاکستان آرمی چیف نے بھی کہا ہے کہ مسلح افواج و پولیس باہم ملکر جرائم کے خلاف انتہائی پرعزم ہیں ۔

آئی جی سندھ نے کہا کہ سندھ پولیس ریکروٹمنٹ بورڈ کی تشکیل انتہائی اہم تھی جس کے تحت ریکروٹمنٹ کے عمل میں غیر جانبداری،

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

08/08/2016 - 21:05:45 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان