سزائے موت کی بحالی کا فیصلہ پارلیمنٹ کرے گی،ترک صدر
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر اگست

مزید بین الاقوامی خبریں

وقت اشاعت: 08/08/2016 - 17:45:46 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 16:48:02 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 16:23:42 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 16:17:47 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 16:13:34 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 16:13:34 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 15:28:04 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 15:28:04 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 15:16:36 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 15:16:36 وقت اشاعت: 08/08/2016 - 15:16:36
پچھلی خبریں - مزید خبریں

سزائے موت کی بحالی کا فیصلہ پارلیمنٹ کرے گی،ترک صدر

ترکی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔08 اگست۔2016ء)ترکی کے صدر اردغان نے کہا ہے کہ اگر پارلیمان اور عوام نے سزائے موت پر بحال کرنے کے حمایت کرتی ہے تو وہ ملک میں سزائے موت دینے کا قانون رائج کرنے کی منظوری دیں گے۔ صدر اردوغان نے گذشتہ ماہ ناکام فوجی بغاوت کے خلاف استنبول میں نکالی گئی ریلی سے خطاب کیا جس میں ہزاروں افراد شریک تھے۔ریلی میں موجود شرکا سے خطاب میں صدر رجب طیب اردوغان نے کہا کہ وہ ملک میں سزائے موت پر دوبارہ پابندی عائد نہیں کریں گے۔

15 جولائی کو ترکی میں ناکام فوجی بغاوت کے بعد سے اب تک 270 افراد کو پھانسی دی جا چکی ہے۔امریکہ میں جلا وطن ترکی رہنما فتح اللہ گولن کی حمایتی افراد پر حکومت کا تختہ اْلٹنے کا الزام ہے جبکہ فتح اللہ گولن نے اس کی تردید کی ہے۔استنبول میں ہونے والی ریلی سے خطاب میں صدر اردوغان نے کہا کہ سزائے موت کے بارے میں فیصلہ ترکی کی پارلیمنٹ کرے گی۔

میں پہلے سے یہ اعلان کر رہا ہوں کہ میں ترکی کی پارلیمنٹ کے فیصلے کو منظور کروں گا‘مغربی ممالک ترکی میں بغاوت کی ناکام کوشش کے بعد حکومتی کریک

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

08/08/2016 - 16:13:34 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان