یورپی یونین شامی مہاجرین کی آباد کاری، انسانی حقوق اور دہشت گردی جیسے معاملات ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 19/03/2016 - 11:30:23 وقت اشاعت: 19/03/2016 - 11:21:01 وقت اشاعت: 19/03/2016 - 11:04:29 وقت اشاعت: 19/03/2016 - 10:59:43 وقت اشاعت: 19/03/2016 - 07:09:21 وقت اشاعت: 19/03/2016 - 02:50:56 وقت اشاعت: 19/03/2016 - 02:50:56 وقت اشاعت: 19/03/2016 - 02:50:56 وقت اشاعت: 19/03/2016 - 02:11:14
پچھلی خبریں -

یورپی یونین شامی مہاجرین کی آباد کاری، انسانی حقوق اور دہشت گردی جیسے معاملات پر منافقت کا مظاہرہ کر رہی ہے۔ترکی کے صدر رجب طیب ایردوان کا خطاب

انقرہ(ا ردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین-انٹرنیشنل پریس ایجنسی۔19مارچ۔2016ء)ترکی کے صدر رجب طیب ایردوان نے یورپی یونین پر الزام عائد کیا ہے کہ وہ شامی مہاجرین کی آباد کاری، انسانی حقوق اور دہشت گردی جیسے معاملات پر منافقت کا مظاہرہ کر رہی ہے۔ ترک ٹی وی چینلز پر براہِ راست نشر کی جانے والی اپنی ایک تقریر میں صدر ایردوان نے شامی مہاجرین کو قبول کرنے سے متعلق یورپی ممالک کی ہچکچاہٹ پر انہیں کڑی تنقید کا نشانہ بنایا۔

انہوں نے کہا کہ ترکی 30 لاکھ شامی مہاجرین کی میزبانی کر رہا ہے جب کہ یورپی ممالک چند ہزار مہاجرین کو قبول کرنے پر آمادہ نہیں۔صدر ایردوان نے برہم لہجے میں کہا کہ یورپ کے عین وسط میں معصوم اور بے آسرا مہاجرین کو شرم ناک حالات میں محصور رکھنے والے یورپی رہنما ترکی کو انسانی حقوق پر لیکچر دینے کے بجائے پہلے اپنے گریبان میں جھانکیں۔صدر ایردوان نے یہ سخت بیان ایسے وقت دیا ہے جب ان کے وزیرِ اعظم احمد اولو برسلز میں یورپ قیادت کے ساتھ مہاجرین سے متعلق مجوزہ معاہدے پر دو روزہ مذاکرات میں شریک ہیں۔

مذاکرات کے دوران یورپی یونین نے ترکی سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ یورپ سے ڈی پورٹ کیے جانے والے مہاجرین کا تحفظ یقینی بنانے کے لیے اپنے قوانین میں ترمیم کرے۔یورپی رہنماﺅں نے ترک حکومت کی جانب سے آزادی اظہار پر قدغنوں اور مخالفین کے خلاف کارروائیوں پر بھی تنقید کی ہے جس پر صدر ایردوان نے اپنے خطاب میں یورپی یونین کی قیادت

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

19/03/2016 - 02:50:56 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان