قومی اسمبلی اجلاس ‘ ہمیں بھارت کی افغانستان میں پاکستان کے خلاف سرگرمیوں کا سنجیدگی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:53:37 وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:53:36 وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:53:36 وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:50:52 وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:50:52 وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:50:52 وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:46:01 وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:38:00 وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:30:20 وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:25:29 وقت اشاعت: 17/03/2016 - 16:25:29
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

قومی اسمبلی اجلاس ‘ ہمیں بھارت کی افغانستان میں پاکستان کے خلاف سرگرمیوں کا سنجیدگی سے نوٹس لینا چاہیے ‘ تحریک انصاف

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔17 مارچ۔2016ء) قومی اسمبلی میں پاکستان تحریک انصاف نے مطالبہ کیا ہے کہ ہمیں بھارت کی افغانستان میں پاکستان کے خلاف سرگرمیوں کا سنجیدگی سے نوٹس لینا چاہیے ‘ہمارے گھر میں آگ لگی ہے ‘سفارتی کوششوں کو تیز کرکے ٹھوس ثبوتوں کے ساتھ دنیا کو بھارتی سرگرمیوں سے آگاہ کیا جائے جبکہ اراکین قومی اسمبلی نے پشاور بم دھماکے کو زیر بحث لانیکا مطالبہ کرتے ہوئے کہاہے کہ بس حادثے کے وقت ڈرائیور نے بہادری کا مظاہرہ کرکے کئی لوگوں کی زندگیاں بچائی ہیں ‘حکومت خراج عقیدت پیش کرے ‘ مقامی لوگوں کے نام پر افغان مہاجرین کے شناختی کارڈ بنانے کی باز پرس کی جائے۔

جمعرات کو اجلاس کے دور ان نکتہ اعتراض پر تحریک انصاف کے رکن سراج محمد خان نے کہا کہ پشاور میں ہونے والے بس حادثے کے وقت ڈرائیور نے بہادری کا مظاہرہ کرتے ہوئے کئی لوگوں کی زندگیاں بچائی ہیں‘ حکومت اس کی بہادری کی تحسین کرے ‘سراج محمد خان نے کہا کہ این اے 6 نوشہرہ میں بھی سکولوں کی نجکاری کی جارہی ہے۔ جے یو آئی (ف) کے رکن قاری محمد یوسف نے کہا کہ مانسہرہ میں ٹرانسفارمر مرمت کرنے کی ورکشاپ بند کرکے نوشہرہ منتقل کرنے سے علاقے کے لوگوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔

ضلع بٹ گرام کی 20 یونین کونسلوں میں سے نو کو مالاکنڈ ڈویژن اور گیارہ ضلع مانسہرہ میں رکھا گیا ہے۔ ہمارے تمام یونین کونسلوں کو مالاکنڈ یا ضلع مانسہرہ میں یکجا طور پر رکھا جائے۔جماعت اسلامی کی رکن عائشہ سید نے کہا کہ مالاکنڈ ڈویژن میں شدید بارشوں سے ہونے والے نقصانات کا ازالہ کیا جائے۔ عائشہ سید نے کہا کہ شدید بارشوں کی وجہ سے مالاکنڈ ڈویژن میں نقصانات ہوئے ہیں۔

این ڈی ایم اے کو اپنا کردار ادا کرنا چاہیے اور لوگوں کے نقصانات کا ازالہ کیا جائے۔ پشاور بس حادثے کے متاثرہ خاندانوں کی کفالت کی جائے۔پی ٹی آئی کے رکن غلام سرور خان نے کہا کہ چھ سے پندرہ سال کی عمر کے اڑھائی کروڑ بچے سکولوں سے باہر ہیں۔ بدقسمتی سے ہماری شرح خواندگی کم ہے۔ راولپنڈی اسلام آباد کے گردونواح میں پرائیویٹ سکولوں نے فیسوں میں 20 فیصد تک اضافہ کردیا ہے۔

یہ معمولی بات نہیں ہے اس کو باقاعدہ ریگولیٹ ہونا چاہیے۔جے یو آئی (ف) کے رکن مولانا امیر زمان نے کہا کہ ان کے حلقہ میں 13 ہزار شناختی کارڈ نادرا نے بلاک کردیئے ہیں۔ نادرا کا مطالبہ ہے کہ تصدیق کنندگان کو ہمراہ لائیں۔ ایسے لوگوں کو بھی شناختی کارڈ نہیں دیئے جارہے جن کے پاس حکومت پاکستان کے سرٹیفکیٹ بھی موجود ہیں۔ ہمارے پورے ڈویژن میں ٹرانسفارمر مرمت کرنے کی کوئی ورکشاپ نہیں ہے اس سے زمیندار متاثر ہوتے ہیں اس

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

17/03/2016 - 16:50:52 :وقت اشاعت