پشاور، سیکریٹریٹ ملازمین کی بس میں دھماکہ ، 15 افراد جاں بحق،خواتین و بچوں سمیت ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 16/03/2016 - 11:36:34 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 11:36:01 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 11:36:01 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 11:34:09 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 11:34:09 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 11:34:09 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 11:02:23 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 11:02:23 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 11:02:23 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 10:21:50 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 10:16:31
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

پشاور، سیکریٹریٹ ملازمین کی بس میں دھماکہ ، 15 افراد جاں بحق،خواتین و بچوں سمیت 25سے زائد زخمی

پشاور/اسلام آباد /مردان (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔16 مارچ۔2016ء ) پشاور میں سنہری مسجد روڈ کے قریب پشاور سیکریٹریٹ کے ملازمین کی بس میں دھماکے سے 15 افراد جاں بحق اور خواتین و بچوں سمیت 25سے زائد زخمی ہوگئے،زخمیوں کو لیڈی ریڈنگ اور دیگر ہسپتالوں میں منتقل کیا گیا جہاں زخمیوں کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے اور ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ظاہرکیا جارہاہے ، پشاور کے ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی۔

بدھ کو پولیس کے مطابق دھماکا سنہری روڈ کے قریب پشاور سیکریٹریٹ کی بس میں ہوا جس کی آواز دور دور تک سنی گئی اور قریبی عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے۔ ایس پی کینٹ پشاور کاشف ذوالفقار نے دھماکے میں 15 افراد کی ہلاکت کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ بس معمول کے مطابق اپنے مقرر وقت پر مردان سے سرکاری ملازمین کو لے کر پشاور آرہی تھی جبکہ دھماکا خیز مواد بس کے اندر سیٹ کے نیچے نصب تھا۔

ایس ایس پی آپریشنز عباس مجید مروت کے کہا کہ بس میں 40 سے زائد افراد سوار تھے اور بظاہر دھماکا پلانٹڈ ڈیوائس کے ذریعے کیا گیا۔ بم ڈسپوزل یونٹ کے مطابق بس میں 8 کلو گرام بارودی مواد ٹائم ڈیوائس کے ساتھ سی این جی کے چار سلنڈرز کے قریب نصب کیا گیا تھا، جس کے پھٹنے سے مکمل طور پر تباہ ہوگئی۔دھماکے کے بعد قانون نافذ کرنے والے اداروں کی بھاری نفری جائے وقوع پر پہنچ گئی اور علاقے کو گھیرے میں لے کر شواہد اکٹھے کئے۔

زخمیوں کو لیڈی ریڈنگ اور دیگر ہسپتالوں میں منتقل کیا گیا جہاں چند زخمیوں کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے۔ صورتحال کے پیش نظر پشاور کے لیڈی ریڈنگ ہسپتال میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ۔ریسکیو حکام کا کہنا ہے کہ 27 زخمیوں کو لیڈی ریڈنگ ہسپتال

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/03/2016 - 11:34:09 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان