افغان سرحد کے قریب روس اور تاجکستان کی مشترکہ فوجی مشقیں
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل مارچ

مزید بین الاقوامی خبریں

وقت اشاعت: 15/03/2016 - 20:09:03 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 20:04:57 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 20:04:57 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 20:04:57 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 20:03:58 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 20:03:58 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 20:03:58 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 19:56:16 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 19:54:14 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 19:47:15 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 19:44:21
پچھلی خبریں - مزید خبریں

افغان سرحد کے قریب روس اور تاجکستان کی مشترکہ فوجی مشقیں

کابل(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔15 مارچ۔2016ء)روس اور اْس کے سابق سوویت حلیف تاجکستان نے افغان سرحد کے قریب بڑی مشترکہ فوجی مشقیں شروع کر دی ہیں۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق وسطی ایشیائی تاجکستان کی وزارتِ دفاع کے ایک ترجمان نے بتایاکہ ان مشقوں میں پچاس ہزار تاجک اور دو ہزار روسی فوجی شرکت کر رہے ہیں۔ بتایا گیا ہے کہ ان مشقوں میں ایک ہزار بکتر بند گاڑیاں، توپ خانہ اور بتیس جنگی اور ٹرانسپورٹ طیارے بھی حصہ لے رہے ہیں۔ نیوز ایجنسی اے ایف پی کے مطابق ان مشقوں میں روسی شرکت افغانستان کے شمالی علاقوں کے ابتر حالات پر بڑھتی ہوئی روسی بے چینی کو ظاہر کرتی ہے۔

15/03/2016 - 20:03:58 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان