سپریم کورٹ کے سندھ اور پولیس افسران کے فیصلے سے پنجاب پولیس کے چھ ہزار سے زائد ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 15/03/2016 - 18:04:32 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 18:02:17 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 18:02:17 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 18:02:17 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 17:53:34 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 17:53:34 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 17:51:32 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 17:51:31 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 17:48:40 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 17:46:01 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 17:46:00
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

سپریم کورٹ کے سندھ اور پولیس افسران کے فیصلے سے پنجاب پولیس کے چھ ہزار سے زائد افسران متاثر

عدالت نے آڈٹ آف ٹرن پرموشن کے مقدمے میں افسران کو فریق بننے کی اجازت دیدی

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔15 مارچ۔2016ء) سپریم کورٹ کے سندھ اور پولیس افسران کے فیصلے سے پنجاب پولیس کے چھ ہزار سے زائد افسران متاثر ہوگئے جبکہ عدالت نے آڈٹ آف ٹرن پرموشن کے مقدمے میں پولیس افسر شاہد پرویز سمیت دیگر افسران کو مقدمے میں فریق بننے کی اجازت دے دی ہے اور تمام درخواستوں کو ایک ساتھ سماعت کے لئے مقرر کرنے کی بھی ہدایت جاری کی ہے دوران سماعت عاصمہ جہانگیر کے مقدمے کی اہمیت کے پیش نظر اور لارجر بینچ تشکیل دینے کی استدعا کی ہے چیف جسٹس انور ظہیر جمالی کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے منگل کو مقدمے کی سماعت کی اس دروان عاصمہ جہانگیر ، علی ظفر ، حامد خان سمیت دیگر وکلاء مختلف افسران کی جانب سے پیش ہوئے عدالت نے کہا کہ چونکہ سندھ افسران سے معاملہ ملتا جلتا ہے اس لئے اس کی سماعت ایک ساتھ کرینگے بعد ازاں عدالت نے سماعت اپریل کے پہلے ہفتے تک ملتوی کردی

15/03/2016 - 17:53:34 :وقت اشاعت