ایوان بالا میں پاک آفغان بارڈر کی مینجمنٹ کے حوالے سے تحریک انصاف کی قرارداد منظور ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:51:42 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:50:52 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:48:07 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:48:07 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:48:07 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:47:11 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:47:11 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:40:59 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:38:35 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:38:35 وقت اشاعت: 15/03/2016 - 16:37:05
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

ایوان بالا میں پاک آفغان بارڈر کی مینجمنٹ کے حوالے سے تحریک انصاف کی قرارداد منظور

ا سلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔15 مارچ۔2016ء) ایوان بالا میں پاک آفغان بارڈر کی مینجمنٹ کے حوالے سے تحریک انصاف کی قرارداد کو منظور کر لیا گیا پارلیمانی سیکرٹری برائے داخلہ مریم اورنگزیب نے پہلے قر ارداد کی مخالفت کی تاہم اپوزیشن کی جانب سے وزارت داخلہ کی پالیسی کو ہدف تنقید بنانے کے بعد انہوں نے قرارداد کی حمایت کی ، ان کا کہنا تھا پاک آفغان بارڈر کی سیکورٹی کو بہتر بنانے کیلئے اقدامات کئے جا رہے ہیں اور تمام سسٹم کو نادرہ کے ساتھ منسلک کیا جا رہا ہے انہوں نے کہاکہ پاک افغان بارڈر پر ایف آئی اے کے رولز لاگو کرنے کیلئے سمری وزیر اعظم کو بھجوائی گئی ہے اس سلسلے میں وزارت داخلہ تمام تر اقدامات کر رہی ہے انہوں نے کہاکہ نیشنل انٹرنل پالیسی کے چار نکات پر عمل درآمد ہورہا ہے اور اس کے بعد نیشنل ایکشن پلان پر عمل درآمد تیز کیا گیا ہے پاکستان تحریک انصاف کے ممبر مراد سعید نے کہاکہ آج سے ڈھائی سال قبل قومی داخلہ سیکورٹی پالیسی آئی تھی مگر بدقسمتی سے اس کے بعد سانحہ اے پی ایس ہوا اس کے بعد سانحہ چارسدہ ہواور ملوث افرادافغانستان سے آئے تھے انہوں نے کہا کہ پاکستان کو مطلوب دہشت گرد افغانستان چلے جاتے ہیں انہوں نے کہاکہ پاکستان کے وزیر اعظم آرمی چیف اور خود وزارت داخلہ یہ بات تسلیم کرتی ہے کہ دہشت گرد افغانستان سے اکر حملے کرتے ہیں انہوں نے کہاکہ اس قرارداد کی مخالفت نہ کی جائے بلکہ بارڈر منجمنٹ سسٹم کو مظبوط بنانے کیلئے موثر اقدامات کئے جائیں جماعت اسلامی کی رکن اسمبلی عائشہ سید نے کہاکہ پاکستان اور افغانستان کے بارڈر کا مسئلہ بہت اہم ہے ہمیشہ یہ بتایا جاتا ہے کہ پاکستان میں جو بھی دہشت گردی ہوتی ہے اس میں افغانستان سے دہشت گرد آتے ہیں اس کے علاوہ سرحدوں کے زریعے سے منشیات کا کاروبار بہت زیادہ ہو رہا ہے افغانستان سے بڑی تعداد میں اسلحہ اور نان کسٹم پیڈ گاڑیاں آتی ہیں انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ فوری طور پر پاک آفغان بارڈر پر سیکورٹی کے انتظامات کئے جائیں رکن ااسمبلی عبدالستار بچانی نے کہاکہ پاک آفغان بارڈر کو مکمل طور پر سیل کرنا بے حد ضروری ہے کیونکہ اس سے پاکستان میں بہت زیادہ مسائل پیدا ہو رہے ہیں رکن اسمبلی ڈاکٹر شیریں مزاری نے کہا کہ مجھے سمجھ نہیں آتی ہے کہ وزرات داخلہ نے کس طرح اس قرارداد کی مخالفت کی ہے کیونکہ اس قرارداد کا تعلق ملک کے دفاع اور سیکورٹی سے ہے کیا پاکستان کی خارجہ اور دفاع کی پالیسیاں مختلف ہیں کیا وزارت داخلہ پاک آفغان سرحد پر بہتر انتظامات نہیں چاہتی ہیں انہوں نے مطالبہ کیا کہ یہ قرارداد پاکستان کے حق میں ہے جے یوآئی کے رکن مولانا نیکہاکہ پاکستان کی سیکورٹی کو مضبوط بنانے کے لئے فوری اقدامات کی ضرورت ہے انہوں نے کہاکہ ہم پاکستان میں دہشت گردی کے تمام وارداتوں کی مذمت کرتا ہوں اوریہ مطالبہ کرتا ہوں کہ تمام دہشت گردوں اور ان کے سہولت کاروں کو کیفر کردار تک پہنچاجا جائے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

15/03/2016 - 16:47:11 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان