ڈوپنگ ٹیسٹ کا الزام ، رافیل نڈال نے قانونی چارہ جوئی کا فیصلہ کرلیا
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر مارچ

مزید کھیلوں کی خبریں

وقت اشاعت: 14/03/2016 - 17:55:08 وقت اشاعت: 14/03/2016 - 17:31:57 وقت اشاعت: 14/03/2016 - 17:12:37 وقت اشاعت: 14/03/2016 - 17:01:18 وقت اشاعت: 14/03/2016 - 16:56:45 وقت اشاعت: 14/03/2016 - 16:53:41 وقت اشاعت: 14/03/2016 - 16:40:16 وقت اشاعت: 14/03/2016 - 16:35:38 وقت اشاعت: 14/03/2016 - 16:30:51 وقت اشاعت: 14/03/2016 - 16:30:46 وقت اشاعت: 14/03/2016 - 16:13:30
پچھلی خبریں - مزید خبریں

ڈوپنگ ٹیسٹ کا الزام ، رافیل نڈال نے قانونی چارہ جوئی کا فیصلہ کرلیا

لندن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔14 مارچ۔2016ء)ٹینس کے سٹار کھلاڑی رافیل ندال فرانس کی سابق وزیر کے خلاف مقدمہ دائر کرنے کا منصوبہ بنا رہے ہیں جنھوں نے کہا تھا کہ سنہ 2012 میں ندال کی سات ماہ تک ٹینس سے غیر حاضری شاید مثبت ڈوپ ٹیسٹ کا نتیجہ تھی۔14 بار گرینڈ سلیم ٹورنامنٹ جیتنے والے ندال نے کہا ہے کہ وہ صحت اور کھیل کی سابق وزیر روزلن بیشلو کے بیان سے اپ سیٹ ہیں۔

29 سالہ ٹینس سٹار نے کہا کہ وہ ان سبھی لوگوں کے خلاف مقدمہ کریں گے جو ’مستقبل میں اس قسم کی باتیں کریں گے۔‘انھوں نے کہا کہ ’فرانس کی وزیر کو سنجیدہ ہونا چاہیے۔ یہ وقت ہے ان کے خلاف جانے کا اور ہم ان کے خلاف مقدمہ کرنے جا رہے ہیں۔’یہ آخری مقدمہ ہوگا۔ میں ان چیزوں سے تھک چکا ہوں۔ میں نے پہلے کئی بار اسے جانے دیا ہے لیکن اب نہیں۔

‘خیال رہے کہ 69 سالہ بیشلو سنہ 2007 سے 2010 کے درمیان سابق صدر سرکوزی کی کابینہ میں وزیر برائے صحت اور کھیل رہ چکی ہیں۔فرانسیسی رہنما نے کہا ’جب آپ کسی ٹینس کھلاڑی کو کئی ماہ تک کھیل سے علیحدہ دیکھتے ہیں تو اس کا مطلب ڈوپ کے مثبت آنے پر کنٹرول ہے۔‘ندال نے اپنے بارے میں اندازہ لگائے جانے پر پہلے ہی کہہ رکھا ہے۔ شیراپووا کے ممنوعہ ادویات کے استعمال کے اعتراف کے بعد سابق عالمی چیمپین نے کہا تھا: ’میں صاف ستھرا ہوں دوستو۔ مجھے کبھی بھی کچھ غلط کرنے کا لالچ نہیں ہوا۔

14/03/2016 - 16:53:41 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان