سورج مکھی کی پچھیتی کاشت پیداوار میں کمی کا باعث ہے،محکمہ زراعت
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
اتوار مارچ

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:50:22 وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:50:19 وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:50:17 وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:48:36 وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:48:36 وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:47:14 وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:47:13 وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:47:13 وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:42:12 وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:42:12 وقت اشاعت: 13/03/2016 - 16:40:39
پچھلی خبریں - مزید خبریں

راولپنڈی

سورج مکھی کی پچھیتی کاشت پیداوار میں کمی کا باعث ہے،محکمہ زراعت

راولپنڈی۔(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔13 مارچ۔2016ء)محکمہ زراعت پنجاب راولپنڈی کے ترجمان کے مطابق کاشتکار سورج مکھی کی بہاریہ کاشت 15 مارچ تک مکمل کریں کیونکہ پچھیتی کاشتہ فصل پیداوار میں کمی کا باعث بنتی ہے۔ سورج مکھی کی کاشت کیلئے اچھے اُگاوٴ والا 2 تا 2 کلو گرام بیج فی ایکڑ استعمال کریں۔ بیج کی شرح اُگاوٴ کم ہونے کی صورت میں بیج کی مقدار میں اسی تناسب سے اضافہ کریں۔

کاشتکار سورج مکھی کی کاشت قطاروں میں کریں اور قطاروں کا درمیانی فاصلہ سوا دو فٹ سے اڑھائی فٹ رکھیں جبکہ پودے سے پودے کا فاصلہ آبپاش علاقوں میں 9 انچ اور بارانی علاقوں میں ایک فٹ رکھیں۔ ترجمان کے مطابق کاشتکار سورج مکھی کی کاشت کیلئے ایسی زمین جس میں نمی برقرار رکھنے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

13/03/2016 - 16:47:14 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان