بلوچستان کی کمیونٹی کو ٹیکس میں رعایت دلانے کیلئے اعلیٰ حکام کو ایوان صنعت و تجارت ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ نومبر

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 13/11/2015 - 21:08:10 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 21:08:10 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 21:07:27 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 21:05:19 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 21:03:22 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 21:03:22 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 21:02:02 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 21:02:02 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 20:59:14 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 20:51:26 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 20:51:26
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کوئٹہ

بلوچستان کی کمیونٹی کو ٹیکس میں رعایت دلانے کیلئے اعلیٰ حکام کو ایوان صنعت و تجارت کی تجاویز و مطالبات پہنچائے جائینگے ،چیف کلکٹر انفارسمنٹ سا?تھ زون زاہد کھوکھرکا اجلاس سے خطاب

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔13 نومبر۔2015ء)چیف کلکٹر انفارسمنٹ سا?تھ زون زاہد کھوکھر نے کہا ہے کہ بلوچستان کی کمیونٹی کو ٹیکس میں رعایت اور دیگر بارے اعلیٰ حکام کو یہاں کی ایوان صنعت و تجارت کے حکام کی تجاویز و مطالبات پہنچائے جائینگے بلوچستان کے تجارت سے وابستہ افراد کا تجارت اور دیگر امور بارے زبردست جانکاری سے دلی خوشی ہوئی ہماری کوشش ہے کہ سمگلنگ ختم اور قانونی تجارت کو فروغ دیا جاسکے ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز ایوان صنعت و تجارت کوئٹہ بلوچستان کے دورے کے موقع پر منعقدہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا اجلاس کی صدارت چیمبر آف کامرس کے صدر جمال ترہ کئی اور نائب صدر سمیع بلوچ نے کی اس موقع پر ایوان صنعت و تجارت کے صدر جمال ترہ کئی نے انہیں بتایا کہ بلوچستان کے امپورٹرز اور ایکسپورٹرز کو مختلف ممالک میں طرح طرح کے مسائل اور مشکلات کا سامنا ہے جبکہ ایران پاکستان کے تجارت سے وابستہ افراد پر طرح طرح کی پابندیاں اور شرائط عائد کررہا ہے جس کی وجہ سے امپورٹ ایکسپورٹ میں کمی ہورہی ہے انہوں نے کہاکہ بلوچستان کے ٹرانسپورٹرز کیلئے بھی ایران اور دیگر ممالک میں مشکلات پیدا کی جارہی ہیں ان سے ہر کلو میٹر پر ٹیکس وصول کیا جارہا ہے جس کی وجہ سے کاروباری حضرات کو مالی مسائل کا سامنا ہے انہوں نے کہاکہ ہمارا مطالبہ ہے کہ بلوچستان کی بزنس کمیونٹی کیلئے ویلیو ٹیکس میں 30 فیصد کمی کردی جائے اس سال دوسرے سالوں کے مقابلوں میں 3 ارب روپے سے زائد ٹیکس جمع کرایا جاچکا ہے ویلیو ٹیکس اور دیگر میں کمی میں سینٹ میں قرار داد پیش کردی گئی ہے جبکہ بلوچستان اسمبلی میں بھی بہت جلد قرار داد لائی جائیگی ہم ایک شورش زدہ صوبے سے تعلق رکھتے ہیں جہاں سیاسی پیکجز معنی نہیں رکھتے وفاق اور دیگر کو بلوچستان میں مسائل پر قابو پانا ہے تو انہیں یہاں کے لوگوں کو روز گار اور تجارت کے مواقع فراہم کرنا ہونگے انہوں نے کہاکہ امپورٹرز اور ایکسپورٹرز کو درپیش مسائل اور دیگر بارے سیکرٹری صنعت و تجارت اور چیئرمین ایف بی آر سے ان کے وفد کی حال ہی میں ملاقاتیں ہوئی ہیں جنہوں نے اس سلسلے میں ہر ممکن تعاون کی انہیں یقین دہانی کرائی ہے انہوں نے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

13/11/2015 - 21:03:22 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان