سینیٹ میں اپوزیشن کااقتصادی راہداری میں مغربی روٹ اور بلوچستان کے اضلاع کو نظرانداز ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ نومبر

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:33:22 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:32:22 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:32:21 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:32:21 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:32:21 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:29:55 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:03:47 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:03:47 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:01:47 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:00:57 وقت اشاعت: 13/11/2015 - 17:00:57
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

اسلام آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:58:14 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:58:15 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:58:18 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:58:19 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:59:54 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:59:56 اسلام آباد کی مزید خبریں

سینیٹ میں اپوزیشن کااقتصادی راہداری میں مغربی روٹ اور بلوچستان کے اضلاع کو نظرانداز کرنے پر احتجاجاً علامتی واک آؤٹ

پاکستان کا اقتصادی روڈ میپ سب کو نظر آرہا ہے کئی ارکان مختلف ایشوز پر مجھ سے بات کرتے ہیں مجموعی مسائل کے حوالے سے تبادلہ خیال نہیں کرتے ہمیں مل بیٹھ کر بات کرنی چاہیے اجلاس کے دور ان اظہار خیال

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔13 نومبر۔2015ء) سینٹ میں اپوزیشن جماعتوں کے ارکان نے پاک چین اقتصادی راہداری میں مغربی روٹ اور بلوچستان کے اضلاع کو نظرانداز کرنے پر احتجاجاً علامتی واک آؤٹ کیا ڈپٹی چیئرمین کی ہدایت پر حکومتی ارکان اپوزیشن کو منا کر ایوان میں واپس لائے جبکہ وفاقی وزیر خزانہ سینیٹر اسحاق ڈار نے کہاہے کہ آئی ایم ایف سے قرضہ شوق سے نہیں لیا داسو اور سندھ کے منصوبوں کیلئے بھی پیسے لئے ملکی مفاد پر کسی قسم کا کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائیگا پاکستان کا اقتصادی روڈ میپ سب کو نظر آرہا ہے کئی ارکان مختلف ایشوز پر مجھ سے بات کرتے ہیں مجموعی مسائل کے حوالے سے تبادلہ خیال نہیں کرتے ہمیں مل بیٹھ کر بات کرنی چاہیے ۔

جمعہ کو سینٹ اجلاس میں وقفہ سوالات کے دور ان وفاقی وزیر سیفران لیفٹیننٹ جنرل (ر) عبدالقادر بلوچ نے بتایا کہ پاک چین اقتصادی راہداری کے منصوبوں کو تعصب کی عینک سے نہیں دیکھنا چاہیے‘ مشرقی اور مغربی روٹ پر منصوبے کے مطابق کام کیا جائیگا۔ انہوں نے بتایا کہ پاک چین اقتصادی راہداری کے تحت مشرقی اور مغربی روٹ پلان کئے گئے ہیں دونوں روٹس کو فی الحال سنگل اور بعد ازاں موٹروے میں تبدیل کیا جائے گا۔

انہوں نے بتایا کہ روڈ کی تعمیر کے منصوبے الگ ہیں اور دیگر اقتصادی منصوبے ان شاہراہوں کے ساتھ بنیں گے ان میں توانائی کے پنجاب میں 5 ہزار میگاواٹ‘ سندھ میں 4 ہزار میگاواٹ‘ بلوچستان میں 300 میگاواٹ‘ کے پی کے میں 1300 میگاواٹ اور آزاد کشمیر میں 11 سے 12سو میگاواٹ کے منصوبے بنیں گے ۔اجلاس کے دور ان وفاقی وزیر عبدالقادر بلوچ کے جواب سے مطمئن نہ ہونے پر سینیٹر عثمان کاکڑ نے کہا کہ ہم احتجاجاً واک آؤٹ کرتے ہیں اس کے ساتھ ہی اپوزیشن جماعتوں سے تعلق رکھنے والے ارکان ایوان سے واک آؤٹ کرگئے اسی دوران سینیٹر سردار اعظم موسیٰ خیل نے کورم کی نشاندہی کردی اور باہر چلے گئے جس پر قائد ایوان نے انہیں کہا کہ آپ باہر نہیں جاسکتے تاہم وہ ایوان سے چلے گئے ڈپٹی چیئرمین کی ہدایت پر حکومتی ارکان اپوزیشن کو منا کر ایوان میں واپس لائے۔

اجلاس کے دور ان پاکستان تحریک انصاف کے سینیٹر نعمان وزیر پاک چین اقتصادی راہداری سے متعلق سوال کا جواب موصول نہ ہونے پر واک آؤٹ کرگئے۔ وفاقی وزیر عبدالقادر بلوچ نے بتایا کہ پاک چین اقتصادی راہداری سے متعلق سوال کا جواب وفاقی وزیر منصوبہ بندی و ترقی احسن اقبال خود آکر دینا چاہتے ہیں۔ سینیٹر نعمان وزیر نے کہا کہ ہمیں یہ طریقہ کار قبول نہیں۔

وہ ڈپٹی چیئرمین کے روکنے کے باوجود ایوان سے واک آؤٹ کرگئے۔ اجلاس کے دور ان اظہار خیال کرتے ہوئے وفاقی وزیر خزانہ سینیٹر اسحاق ڈار نے کہا کہ میں بار

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

13/11/2015 - 17:29:55 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان