دہشت گردی اور انتہا پسندی مشترکہ دشمن ہیں ،ملکر لڑیں گے،پاک تاجک اتفاق
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات نومبر

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:46:44 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:46:44 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:46:44 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:45:06 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:45:06 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:45:06 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:42:28 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:42:28 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:42:28 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:41:46 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 16:41:46
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

دہشت گردی اور انتہا پسندی مشترکہ دشمن ہیں ،ملکر لڑیں گے،پاک تاجک اتفاق

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔12 نومبر۔2015ء)پاکستان اور تاجکستان نے مشترکہ بزنس کونسل کے قیام ،مجرموں کے تبادلے ، زمینی اور فضائی رابطوں کے فروغ سمیت 7 شعبوں میں تعاون بڑھانے پر اتفاق کیا ہے جبکہ دونوں ممالک نے دہشت گردی اور انتہاپسندی کو مشترکہ دشمن قرار دیتے ہوئے ا نکے خاتمے اور عوام کی سماجی و معاشی ترقی کیلئے مل کر کام کرنے کا عزم کا اظہار کیا ہے۔

جمعرات کے روز تاجک صدر امام علی رحمان اپنے استقبالیہ میں دی جانیوالی تقریب میں شرکت کیلئے وزیراعظم ہاؤس پہنچے تو وزیراعظم میاں نوازشریف نے مہمان کا گرمجوشی کے ساتھ استقبال کیا ،معزز مہمان کی آمد پر دونوں ممالک کے قومی ترانے بجائے گئے ،پاک فوج کے چاق و چوبند دستوں نے معزز مہمان کو سلامی دی ،اس موقع پر دونوں رہنماؤں نے اپنے اعلیٰ سطح وفود کا باری باری تعارف کرایا اور مصافحہ کیا،وزیر اعظم اور تاجک صدر کے درمیان ون آن ون ملاقات ہوئی جس میں پاک تاجک تعلقات سمیت باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا،وزیر اعظم نے کہا کہ پاکستان وسط ایشیائی ممالک کو انتہائی اہمیت دیتا ہے ،تاجکستان کے ساتھ مضبوط اقتصادی اور تجارتی تعلقات چاہتے ہیں،تاجکستان کے ساتھ زمینی اور فضائی رابطے کو مزید مربوط بنانے کے خواہاں ہیں جبکہ تاجکستان اور کرغزستان سے بجلی ترسیل کا منصوبہ کاسا1000 کی جلد از جلد تکمیل چاہتے ہیں،اس موقع پر تاجک صدر امام علی رحمن نے کہا کہ تاجکستان اور پاکستان کے تعلقات مضبوط سے مضبوط ہورہے ہیں ان تعلقات کو بلندیوں تک لیکر جائیں گے اور اس حوالے سے دونوں ممالک کو عوامی سطح پر رابطوں کو فروغ دینا چاہیے،بعدازاں دونوں ممالک کے درمیان وفود کی سطح پر مذاکرات ہوئے جس میں انسداد دہشت گردی ،منشیات کی روک تھام،مشترکہ بزنس کونسل کے قیام ،توانائی ،صنعتی ،دفاع اور ثقافت کے شعبوں میں تعاون پر تبادلہ خیال کیا گیا جبکہ 7 شعبوں میں تعاون کے معاہدوں کی یادداشتوں پر دستخط کئے گئے دستاویزات کا تبادلہ کیا گیا،دونوں ممالک کے درمیان مشترکہ بزنس کونسل کے قیام اور مجرموں کے تبادلوں کے معاہدوں پر دستخط کئے گئے جبکہ دفاع ،سائنس و ٹیکنالوجی ،توانائی ،صنعتی او رثقافت کے شعبوں میں تعاون کی یادداشتوں پر دستخط کئے گئے جبکہ دونوں ممالک

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

12/11/2015 - 16:45:06 :وقت اشاعت