شام میں دہشت گردوں کے خلاف مشترکہ مشترکہ موقف ضروری ہے،اقوام متحدہ
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات نومبر

مزید بین الاقوامی خبریں

وقت اشاعت: 12/11/2015 - 13:06:18 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 13:02:57 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 13:02:57 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 13:02:57 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 13:02:11 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 13:02:11 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 13:02:11 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 12:58:50 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 12:58:50 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 12:55:15 وقت اشاعت: 12/11/2015 - 12:46:52
پچھلی خبریں - مزید خبریں

شام میں دہشت گردوں کے خلاف مشترکہ مشترکہ موقف ضروری ہے،اقوام متحدہ

نیویارک۔ 12نومبر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔12 نومبر۔2015ء) اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی اسٹیفن ڈی مستوراکا کہنا ہے کہ شام میں دہشت گردوں کے خلاف ایک مشترکہ مشترکہ موقف کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ نیویارک میں ایک پریس کانفرنس میں انھوں نے کہا ہے کہ شام کے بارے میں ویانا مذاکرات میں شریک تمام ملکوں کو دہشت گرد گروہوں کے بارے میں ، ایک مشترکہ موقف تک پہنچنا چاہئے۔

انھوں نے کہا کہ ہمارا مقصد شام کے بحران کے سیاسی حل کے عمل میں روس، ایران اور سعودی عرب جیسے بڑے ملکوں کو شامل کرنا تھا۔ انھوں نے کہا کہ اب شام میں دہشت گرد گروہوں کے بارے میں ایک مشترکہ نظریئے تک پہنچنا ان مذاکرات میں شریک ملکوں کا کام ہے۔انھوں نے عالمی طاقتوں سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ شام کے بحران کے تعلق سے جو نیا موڑ آیا ہے اس سے استفادہ اور آئندہ ویانا مذاکرات میں اس بحران کے سیاسی حل کی کوششوں کو تقویت دیں۔انھوں نے کہا کہ اس نئے موڑ کو ہاتھ سے نہیں جانے دینا چاہئے اور شام کے بحران کے سیاسی حل کے لئے آئندہ مذاکرات کو نتیجہ خیز بنانے کی ضرورت ہے۔

12/11/2015 - 13:02:11 :وقت اشاعت