پاکستان اور بیلا روس مابین 6ماہ میں اعلیٰ سطح پر رابطے ہوئے‘توقع ہے کہ بیلا روس ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل نومبر

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 10/11/2015 - 14:21:23 وقت اشاعت: 10/11/2015 - 14:20:37 وقت اشاعت: 10/11/2015 - 14:20:37 وقت اشاعت: 10/11/2015 - 14:18:15 وقت اشاعت: 10/11/2015 - 14:13:27 وقت اشاعت: 10/11/2015 - 14:09:09 وقت اشاعت: 10/11/2015 - 13:52:54 وقت اشاعت: 10/11/2015 - 13:40:31 وقت اشاعت: 10/11/2015 - 13:37:21 وقت اشاعت: 10/11/2015 - 13:31:47 وقت اشاعت: 10/11/2015 - 13:31:47
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

پاکستان اور بیلا روس مابین 6ماہ میں اعلیٰ سطح پر رابطے ہوئے‘توقع ہے کہ بیلا روس کے وزیراعظم کے دورہ سے تعاون کی نئی راہیں کھلیں گی‘بیلا روس کے سرمایہ کاروں کا پاکستان میں خیر مقدم کرینگے ‘بیکوف کے دورے سے پاکستان اور بیلا روس کے درمیان طے شدہ نکات پر عملدرآمد کو یقینی بنانے میں مدد ملے گی ‘نواز شریف

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔10 نومبر۔2015ء) پاکستان اور بیلا روس کے درمیان اقتصادی تعاون کے فروغ،سفارتخانوں کیلئے زمین فراہم کرنے، تعلیم، صحت، سرمایہ کاری سمیت مختلف شعبوں میں تعاون کے 18سمجھوتے طے پا گئے، وزیراعظم نواز شریف نے کہا ہے کہ دونوں ملکوں کے درمیان گزشتہ چھ ماہ میں اعلیٰ سطح پر رابطے ہوئے،توقع ہے کہ بیلا روس کے وزیراعظم کے دورہ پاکستان سے تعاون کی نئی راہیں کھلیں گی،بیلا روس کے سرمایہ کاروں کا پاکستان میں خیر مقدم کریں گے، وزیراعظم آندرے کوبیکوف کے دورے سے پاکستان اور بیلا روس کے درمیان طے شدہ نکات پر عملدرآمد کو یقینی بنانے میں مدد ملے گی جبکہ بیلا روس کے وزیراعظم آندرے کوبیکوف نے کہاکہ زراعت کے شعبوں میں مشترکہ منصوبے شروع کریں گے، باہمی تجارت کا حجم بھرپور صلاحیت تک بڑھائیں گے، زراعت، انفراسٹرکچر، معدنیات، تیل و گیس کے شعبوں میں پاکستان کے ساتھ تعاون بڑھائیں گے،پاکستان بیلا روس دوستی زندہ باد، دونوں ممالک کے درمیان معاہدوں پر دستخط اور تعلقات مستحکم کرنے کا عزم ہے۔

وہ پاکستان اور بیلا روس کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون کے سمجھوتوں اور وفود کی سطح پر مذاکرات کے بعد مشترکہ نیوز کانفرنس کر رہے تھے۔قبل ازیں وزیراعظم ہاؤس میں بیلا روس کے وزیراعظم آندرے بیکوف کواستقبالہ دیا گیا۔ وزیراعظم نواز شریف نے معزز مہمان کا استقبال کیا، معزز مہمان کو وزیراعظم ہاؤس پہنچنے پر گارڈ آف آنر پیش کیا گیا۔ اس موقع پر دونوں ملکوں کے قومی ترانے بھی بجائے گئے۔

جس کے بعد وزیراعظم نواز شریف اور بیلا روس کے ہم منصب کے درمیان ملاقات ہوئی، جس میں باہمی دلچسپی کے امور اور دوطرفہ تعلقات پر بات چیت کی گئی۔ ملاقات میں دونوں رہنماؤں نے مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانے کا جائزہ لیا، دونوں وزرائے اعظم نے توقع ظاہر کی کہ اعلیٰ سطح رابطوں کا فروغ پاکستان اور بیلا روس کے درمیان تعلقات کو مزید مستحکم بنانے میں معاون ثابت ہو گا۔

ملاقات کے بعد پاکستان اور بیلا روس کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانے کیلئے وفود کی سطح پر مذاکرات ہوئے، جس میں وزیراعظم نواز شریف نے پاکستانی وفد کی قیادت کی جبکہ بیلا روز کے وفد کی قیادت وزیراعظم آندرے کوبیکوف نے کی۔ مذاکرات میں دونوں ملکوں کے درمیان تجارت، زراعت، صحت، تعلیم، ثقافت، معیشت اور سائنس و ٹیکنالوجی میں تعاون بڑھانے پر بات چیت کی گئی۔

مذاکرات میں کسٹمز کے شعبے میں ایک دوسرے کے تجربات سے استفادے پر بھی غور کیا گیا۔ مذاکرات کے بعد پاکستان اور بیلا روس کے درمیان سمجھوتوں اور مفاہمت کی یادداشتوں پر دستخط کی تقریب ہوئی۔ وزیراعظم نواز شریف اور ان کے بیلا روس کے ہم منصب نے تقریب میں شرکت کی۔ تقریب میں دونوں ملکوں کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون کے 18سمجھوتے طے پائے، دونوں ملکوں کے درمیان تجارت، معیشت، زراعت ، صحت اور تعلیم کیلئے تعاون بڑھانے کے معاہدے طے پائے، اسلام آباد اور منسک میں سفارتخانوں کیلئے زمین فراہم کرنے کا معاہدہ طے پایا، دونوں ملکوں کے وزرائے اعظموں نے اراضی کے معاہدے پر دستخط کئے۔

پاکستان اور بیلا روس کے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

10/11/2015 - 14:09:09 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان