قابل تقسیم محاصل میں 50رب روپے کے بقایا جات وفاق کی طرف سے سندھ کو ادا نہیں کیے جارہے، ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر نومبر

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:58:23 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:58:23 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:57:22 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:57:22 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:57:22 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:56:27 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:56:27 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:56:27 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:55:36 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:55:36 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 22:55:36
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

قابل تقسیم محاصل میں 50رب روپے کے بقایا جات وفاق کی طرف سے سندھ کو ادا نہیں کیے جارہے، وزیر اطلاعات سندھ

سندھ کو قابل تقسیم محاصل میں سے اپنا پورا حصہ دے، کھوکھراپار میں سکول کے دورے کے موقع پر میڈیا سے بات چیت

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔9 نومبر۔2015ء) سندھ کے سینئر وزیر اطلاعات و تعلیم نثار احمد کھوڑو نے کہا ہے کہ قابل تقسیم محاصل میں سے سندھ کے وفاقی حکومت کی طرف 50ارب روپے کے بقایا جات ہیں جو کہ وفاق کی طرف سے سندھ کو ادا نہیں کیے جارہے ہیں ۔وفاقی حکومت کا یہ عمل سندھ سے زیادتی ہے ۔وفاقی حکومت عملی طور پر اپنا وعدے وفا نہیں کرسکتی تو بلنگ و بانگ دعوے بھی نہیں کرے اور سندھ کو قابل تقسیم محاصل میں سے اپنا پورا حصہ دے ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے پیر کو کھوکھراپار کے علاقے ملیر میں واقع پبلک ماڈل اسکول کے دورے کے دوران میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ۔نثار احمد کھوڑو نے کہا کہ وفاقی حکومت کو قابل تقسیم محاصل میں سے سندھ کو 164ارب روپے میں سے 50ارب روپے دینے ہیں جو ابھی تک سندھ کو نہیں دیئے گئے جو سندھ کے ساتھ زیادتی ہے ۔انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت سندھ کو مکمل طور فنڈز فراہم کرنے سے متعلق جھوٹ بول رہی ہے اور سندھ کو قابل تقسیم محاصل میں سے اپنا مکمل طور پرحصہ فراہم نہیں کیاجارہاہے ۔

انہوں نے کہا

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

09/11/2015 - 22:56:27 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان