سردار ایاز صادق 268 ووٹ لیکر قومی اسمبلی کے ایک بارپھر سپیکر منتخب ہوگئے ،تحریک ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر نومبر

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 09/11/2015 - 15:01:49 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 15:01:49 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 15:01:49 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 14:59:30 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 14:59:30 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 14:59:30 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 14:39:40 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 14:39:40 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 14:39:40 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 14:38:30 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 14:38:30
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

اسلام آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:58:14 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:58:15 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:58:18 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:58:19 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:59:54 وقت اشاعت: 18/01/2017 - 10:59:56 اسلام آباد کی مزید خبریں

سردار ایاز صادق 268 ووٹ لیکر قومی اسمبلی کے ایک بارپھر سپیکر منتخب ہوگئے ،تحریک انصاف کے شفقت محمود 31 ووٹ لے سکے

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔9 نومبر۔2015ء) مسلم لیگ (ن) کے سردار ایاز صادق 268 ووٹ لیکر قومی اسمبلی کے بیسویں سپیکر منتخب ہوگئے جبکہ تحریک انصاف کے امیدوار شفقت محمود نے 31 ووٹ حاصل کئے ۔ پیر کو نئے سپیکر کے انتخاب کیلئے قومی اسمبلی کا اجلاس قائم مقام سپیکر جاوید مرتضیٰ عباسی کی صدارت میں ہوا جس میں وزیراعظم محمد نواز شریف نے بھی شرکت کی۔

قائم مقام سپیکر نے نئے سپیکر کے انتخاب کیلئے طریقہ کار کا اعلان کیااور بعد ازاں سردار ایاز صادق کی کامیابی پر ان سے حلف لیا اورسپیکر کی نشست ان کے حوالے کر دی۔سپیکر کے انتخاب کے دور ان سردار ایاز صادق کی طرف سے جنید انوار اور شفقت محمود کی طرف سے انجینئر علی محمد نے پولنگ ایجنٹ کے فرائض انجام دیئے۔ سب سے پہلا ووٹ وزیراعظم محمد نواز شریف نے کاسٹ کیا اور ووٹ ڈالنے کے بعد وزیراعظم ایوان سے روانہ ہوگئے پولنگ کا عمل 12 بج کر 55 منٹ تک بغیر کسی وقفے کے جاری رہا اس دوران قائم مقام سپیکر نے متعدد مرتبہ ارکان کو ووٹ ڈالنے کی ہدایت کرتے رہے اور 12 بج کر 50 منٹ پر قائم مقام سپیکر نے حتمی اعلان کیا کہ جو ارکان ووٹ ڈالنے سے رہ گئے ہیں وہ اپنا ووٹ کاسٹ کرلیں مگر اس حتمی اعلان پر کوئی بھی رکن ووٹ ڈالنے نہیں آیا جس پر قائم مقام سپیکر نے بارہ بج کر 55 منٹ پر سیکرٹری قومی اسمبلی محمد ریاض کو ووٹوں کی گنتی کا حکم دیا اور بیلٹ باکس خالی کر کے ووٹوں کی گنتی شروع کردی گئی، پولنگ اور گنتی کے دوران ارکان خوش گپیوں میں مصروف رہے تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان دس بج کر 30 منٹ پر ایوان میں آئے اور دس بج کر

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

09/11/2015 - 14:59:30 :وقت اشاعت