میچ فکسنگ کے الزام میں نیپالی فٹبالرز پر غداری کا مقدمہ درج کرلیا گیا
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر نومبر

مزید کھیلوں کی خبریں

وقت اشاعت: 09/11/2015 - 13:26:16 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 13:24:55 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 13:19:52 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 13:19:50 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 13:18:10 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 13:11:45 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 13:11:43 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 13:11:42 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 13:10:27 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 13:10:25 وقت اشاعت: 09/11/2015 - 12:42:53
پچھلی خبریں - مزید خبریں

میچ فکسنگ کے الزام میں نیپالی فٹبالرز پر غداری کا مقدمہ درج کرلیا گیا

کھٹمنڈو (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔9 نومبر۔2015ء)نیپال میں پولیس نے کہا ہے کہ پانچ نیپالی فٹبالرز پر 2011 کے ورلڈ کپ میں کوالیفائنگ راوٴنڈ کے دوران میچ فکسنگ کے الزامات عائد کیے گئے ہیں اور ان پر غداری کا مقدمہ قائم کردیا گیا ہے۔نیپالی فٹبال ٹیم کے سابق کپتان ساگر تھاپا اور گول کیپر رتیش تھاپا اور دیگر تین کھلاڑیوں کو گذشتہ ماہ زیرِ حراست لیا گیا۔

پولیس کے مطابق جنوب مشرقی ایشیا کے ان میچ فکسرز کے بینک اکاوٴنٹس میں کثیر رقم پائی گئی ۔کھلاڑیوں پر الزام ہے کہ انھوں نے میچوں میں جان بوجھ کر کوالیفائنگ کے کئی مواقع گنوائے۔کھٹمنڈو میں خصوصی عدالت کے رجسٹرار بھدرا کلی پوکھرل نے بتایا کہ حکومت نے گذشتہ ماہ پانچ فٹبالرز کو غداری کے الزام میں گرفتار کیا ہے اور عمر قید کی سزا کی درخواست کی گئی ۔پوکھرل نے بتایا کہ ان پر 1989 کے ایکٹ کے تحت مقدمہ قائم کیا گیا جس کی رو سے کوئی بھی جس نے نیپال کی خودمختاری، سالمیت یا قومی اتحاد کو خطرے میں ڈالنے کی کوشش کی یا وہ اس کا مرتکب ہوا وہ عمر قید کی سزا کا ذمہ دار ٹھہرایا جائیگاتوقع کی جارہی ہے کہ فٹبالرز کو عدالت کے سامنے پیش کیا جائیگا۔

09/11/2015 - 13:11:45 :وقت اشاعت