خیبرپختونخوا بجٹ میں صحت کے شعبے کیلئے38ارب روپے سے زائدرقم مختص
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر جون

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:56:34 وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:54:36 وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:54:36 وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:54:36 وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:52:40 وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:52:40 وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:50:55 وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:50:55 وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:42:04 وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:42:04 وقت اشاعت: 15/06/2015 - 17:40:49
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

خیبرپختونخوا بجٹ میں صحت کے شعبے کیلئے38ارب روپے سے زائدرقم مختص

بجٹ میں ہیپا ٹا ئیٹس، ایچ آئی وی اور تھیلی سیمیا کوکنٹرول کرنے کیلئے بھی نیا مربوط پروگرام شروع کیا جائے گا

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 15 جون۔2015ء) صوبائی بجٹ میں صحت کے شعبے کیلئے38ارب روپے سے زائدرقم مختص کی گئی ہے۔ صوبائی بجٹ میں صحت کے شعبے کیلئے 29ارب 95کروڑ سے زائد رقم مختص کی گئی ہے جبکہ سالانہ ترقیاتی پروگرام میں صحت کے شعبے کے 98 شعبوں کے لئے 8ارب 28 کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں۔خیبر پختونخوا کے سینئر صوبائی وزیر صحت شہرام خان تراکئی نے مالی سال 2015-16 کے لئے صوبائی بجٹ کو ایک متوازن عوام دوست اور ٹیکس فری قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس بجٹ میں کوئی نیا ٹیکس نہیں لگایا گیا اور اس میں غربت کے خاتمے اور غریب ومتوسط طبقے کی فلاح وبہود کے لئے موثر اقدامات کئے گئے ہیں جبکہ صحت اور تعلیم کے شعبوں کو ان کی اہمیت کو مد نظر رکھتے ہوئے ان پر خصوصی توجہ دی گئی ہے۔

انہوں نے کہا ہے کہ صوبائی بجٹ میں صحت کے شعبے کیلئے 29ارب 95کروڑ سے زائد رقم مختص کی گئی ہے جبکہ سالانہ ترقیاتی پروگرام میں صحت کے شعبے کے 98 شعبوں کے لئے 8ارب 28 کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں۔ ان شعبوں میں ڈویژنل سطح پر ایبٹ آباد، ڈی آئی خان اور سوات میں فوڈ اور ڈرگ ٹیسٹنگ لیبارٹیوں کا قیام،پشاور

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

15/06/2015 - 17:52:40 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان