کراچی چیمبر آف کامرس نے نئے وفاقی بجٹ میں بلاواسطہ ٹیکسوں کا اضافی بوجھ موجودہ ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
اتوار جون

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:31:47 وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:31:47 وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:31:47 وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:30:01 وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:30:01 وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:30:01 وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:23:44 وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:23:44 وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:21:58 وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:21:58 وقت اشاعت: 14/06/2015 - 17:21:58
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

کراچی چیمبر آف کامرس نے نئے وفاقی بجٹ میں بلاواسطہ ٹیکسوں کا اضافی بوجھ موجودہ ٹیکس گزاروں پر ڈالنے کو ظلم قرار دیدیا

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 14 جون۔2015ء) کراچی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری نے وفاقی بجٹ 2015-16 میں بلاواسطہ ٹیکسوں کا اضافی بوجھ موجودہ ٹیکس گزاروں پر ڈالنے کو ظلم و زیادتی قرار دیا ہے ۔ نیا وفاقی بجٹ حکومت کے اقتصادی وژن کی نفی کرتا ہے ۔ کراچی چیمبر کی جانب سے بجٹ پر تفصیلی تجزیہ جاری کیا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ نئے وفاقی بجٹ میں زراعت ، کارپوریٹ سیکٹرز اور خیبرپختونخوا کی صنعتوں کو ریلیف تو فراہم کیا گیا ہے تاہم بلاواسطہ ٹیکسوں اضافی بوجھ موجودہ ٹیکس گزاروں بالخصوص کراچی سے تعلق رکھنے والے تاجر و صنعتکاروں پر ڈال دیا ہے جو ملکی خزانہ میں 65 فیصد سے زائد ریونیو کا حصہ دار ہیں ۔

کراچی چیمبر نے کہا ہے کہ ایس ایم ای سیکٹر ملک کی جی ڈی پی ہیں ۔ 37 فیصد کا حصہ ہونے کے ساتھ

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

14/06/2015 - 17:30:01 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان