موسم گرما کی مقبول ترین سبزیاں بھنڈی توری، بینگن اور ٹینڈے رواں ماہ کاشت کرنے ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
اتوار جون

لاہور

موسم گرما کی مقبول ترین سبزیاں بھنڈی توری، بینگن اور ٹینڈے رواں ماہ کاشت کرنے کی ہدایت

لاہور ۔ (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔14جون۔2015ء) کاشتکار موسم گرماکی پنجاب میں کاشت ہونے والی مقبول ترین سبزیاں بھنڈی توری،بینگن اور ٹینڈے جون اور جولائی میں کاشت کریں۔ محکمہ زراعت پنجاب کے مطابق بھنڈی کی زیادہ تر کاشت کمالیہ، ساہیوال، چشتیاں اور فیصل آباد میں کی جاتی ہے۔ بھنڈی توری سال میں دو مرتبہ بڑی کامیابی کے ساتھ کاشت کی جاتی ہے۔

پہلی فصل وسط فروری سے مارچ کے آخر تک جبکہ دوسری فصل جون، جولائی میں کاشت ہوتی ہے۔ ذرخیز میرا اور پانی کے بہتر نکاس والی زمین پیداوار کیلئے موزوں ہے ۔انہوں نے کہاکہ بھنڈی توری کی بوائی کیلئے اچھے اگاؤ والا10سے12کلو گرام بیج فی ایکڑ کافی ہوتا ہے۔ "سبز پری"محکمہ کی سفارش کر دہ قسم ہے، یہ کیڑوں اور بیماریوں کے خلاف بہتر قوت مدافعت رکھتی ہے۔

انہوں نے کہاکہ بینگن پاکستان کے تمام صوبوں میں کاشت کیا جاتا ہے۔لیکن پنجاب میں بینگن بہاولپور، فیصل آباد اور لاہور ڈویژن میں وسیع رقبے پر کاشت کیا جاتا ہے ۔ بینگن کیلئے گرم مرطوب آب و ہوا کی ضرورت ہوتی ہے۔ نرالا ،بے مثال، قیصر،دل نشین (گول)بینگن کی منظورشدہ اقسام ہیں جو کہ اعلیٰ پیداواری صلاحیت کی حامل اور بیماریوں کے خلاف بہتر قوت مدافعت رکھتی ہیں۔

انہوں نے کہاکہ ٹینڈا موسم گرما کی بڑی اہم اور مقبول سبزی ہے۔ ٹینڈے کا پھل وٹامن اے، بی اور سی کا اہم ذریعہ ہے۔ اسکی کا شت کیلئے گرم اور خشک موسم موزوں ہے۔ پنجاب کے تقریباََ تمام میدانی علاقوں کے ساتھ ساتھ بارانی علاقوں میں بھی کاشت کی جاتی ہے ۔محکمہ کی سفارش کردہ ٹینڈا کی قسم کا نام دلپسند ہے جسکا پھل گول اور ہلکے سبز رنگ کا ہوتاہے اور ذائقے میں بے مثال ہے۔

اسکی پیداواری صلاحیت 10ٹن فی ایکڑ ہے۔انہوں نے کہاکہ پچھیتی فصل وسط جون سے وسط جولائی تک کاشت کی جاتی ہے۔ٹینڈے کی کا شت کیلئے زرخیز میرا زمین نہایت موزوں ہے۔انہوں نے کہاکہ بوائی کے فوراً بعد آبپاشی کریں اور اس با ت کا خیال رکھا جائے کہ پانی پٹریوں کے اوپر نہ چڑھنے پائے۔ بیج تک صرف نمی پہنچے تا کہ زمین سخت نہ ہو اور بیج کا اُگاؤ متاثر نہ ہو ورنہ پیداوار پر برا اثر پڑے گا۔ بعد میں ہفتہ وار آبپاشی کرتے رہنا چاہئے۔ جب زیادہ گرمی ہو جائے تو اس وقت پانی کی ضرورت بڑھ جاتی ہے لہٰذا ہر چوتھے دن آبپاشی کریں۔ بارش ہونے کی صورت میں یا موسم میں تبدیلی کے دوران آبپاشی کے وقفہ میں ردوبدل کیاجا سکتا ہے۔

14/06/2015 - 14:52:38 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان