سندھ کا نئے مالی سال کا بجٹ روایتی ہے ،مکمل طور پر شہری علاقوں کو نظرانداز کردیا ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ جون

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:55:21 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:53:43 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:49:44 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:36:38 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:36:38 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:34:59 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:30:44 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:30:44 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:30:44 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:29:02 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 18:29:01
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

سندھ کا نئے مالی سال کا بجٹ روایتی ہے ،مکمل طور پر شہری علاقوں کو نظرانداز کردیا گیا ہے ،خواجہ اظہار

ایک ایک محکمے کی کارکردگی کا جائزہ لیکر اس کا کچھا چٹھا کھولیں گے،دعوے سے کہتے ہیں 2016کے بجٹ میں بھی یہی اسکیمیں ہونگی،میڈیا سے بات چیت

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 13 جون۔2015ء)متحدہ قومی موومنٹ کے رہنما اور سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر خواجہ اظہار الحسن نے کہا ہے کہ سندھ کا نئے مالی سال کا بجٹ روایتی ہے ۔اس بجٹ میں مکمل طور پر شہری علاقوں کو نظرانداز کردیا گیا ہے ۔ہم اس بجٹ کو مسترد کرتے ہیں ۔ایک ایک محکمے کی کارکردگی کا جائزہ لے کر اس کا کچھا چٹھا کھولیں گے ۔دعوے سے کہتے ہیں کہ 2016کے بجٹ میں بھی یہی اسکیمیں ہوں گی اور یہی روایتی تقریریں ہوں گی ۔

شہری اور دیہی علاقوں کے عوام کے حقوق کے لیے ایم کیو ایم سندھ اسمبلی سمیت ہر سطح پر آواز اٹھائے گی اور اب حکومت کو ٹف ٹائم دینے کا وقت قریب آگیا ہے ۔ان خیالات کااظہار انہوں نے ہفتہ کو بجٹ اجلاس کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہا کہ حکومت

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

13/06/2015 - 18:34:59 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان