حکومت سندھ نے تعلیمی بجٹ کو 7.6فیصد بڑھا کر 144.67ارب روپے کردیا
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ جون

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 13/06/2015 - 17:00:31 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 17:00:31 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 17:00:01 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 17:00:01 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 17:00:01 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 16:59:28 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 16:59:28 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 16:59:28 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 16:58:15 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 16:58:15 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 16:58:15
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

حکومت سندھ نے تعلیمی بجٹ کو 7.6فیصد بڑھا کر 144.67ارب روپے کردیا

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 13 جون۔2015ء)حکومت سندھ نے نئے مالی سال میں سب سے زیادہ رقم تعلیم کے شعبے کے لیے مختص کی ہے اور تعلیمی بجٹ کو مزید 7.6فیصد بڑھادیا گیا ہے۔نئے مالی سال میں تعلیم کے لیے 144.67ارب روپے مختص کیے گئے ہیں ۔رواں مالی سال 134.37ارب روپے مختص کیے گئے تھے ۔نئے مالی سال میں تعلیمی منصوبوں کے لیے سالانہ ترقیاتی پروگرام کا حجم رواں سال کے 10.7ارب روپے سے بڑھا کر 13.2ارب روپے کردیا گیا ہے ،جس میں یونیورسٹیوں اور بورڈز کے لیے 2ارب روپے ،ایس ٹیوٹا کے لیے ایک ارب اور خصوصی تعلیم کے لیے 20کروڑ روپے شامل ہیں ۔

نئے مالی سال کے بجٹ میں یونیورسٹیوں اور تعلیمی اداروں کا بجٹ 6.2ارب روپے کرنے کی تجویز ہے ۔3.743ارب روپے کی لاگت سے 25کمپری ہینسو ،3.235ارب روپے کی لاگت سے 25انگلش میڈیم اسکول فاسٹ ٹریک کنسٹرکشن ٹیکنالوجی مراکز قائم کیے جائیں گے ۔بے نظیر یوتھ ڈویلپمنٹ پروگرام کے تحت 10لاکھ نوجوانوں کو مختلف شعبوں میں فنی تربیت

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

13/06/2015 - 16:59:28 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان