جموں میں مسلمانوں کو گھروں سے بے دخل کرنے کا سلسلہ بند نہ کیا گیا تو سخت رد عمل ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ جون

مزید کشمیر کی خبریں

وقت اشاعت: 13/06/2015 - 15:04:01 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 15:04:01 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 15:04:01 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 14:45:21 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 14:45:21 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 14:45:21 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 14:17:06 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 14:05:21 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 14:03:42 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 14:03:42 وقت اشاعت: 13/06/2015 - 14:03:03
پچھلی خبریں - مزید خبریں

جموں میں مسلمانوں کو گھروں سے بے دخل کرنے کا سلسلہ بند نہ کیا گیا تو سخت رد عمل کا اظہار کرینگے، میر واعظ عمر فاروق

سرینگر (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 13 جون۔2015ء)چیئرمین کل جماعتی حریت کانفرنس میرواعظ محمدعمر فاروق نے جموں میں مسلمانوں کو جنگلاتی اراضی خالی کرانے کی آڑ میں اپنی زمینوں اور گھروں سے بے دخل کرنے کے ناروا اقدام کو نا قابل قبول قرار دیتے ہوئے خبرادر کیا ہے کہ اگر کٹھ پتلی حکومت نے اس سلسلے کو فوراً بند نہیں کیا تو اسکے خلاف سخت رد عمل ظاہر کیا جائے گا۔

سرینگر میں عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے میر واعظ عمر فاروق نے تحریک آزادی میں جموں کے مسلمانوں کی قربانیوں کو ناقابل فراموش قرار دیتے ہوئے کہا کہ مقبوضہ وادی کے مسلمان جموں کے اپنے بھائیوں کوکبھی تنہا نہیں چھوڑیں گے۔ انہوں نے کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی کی بھارتی حکومت اور کٹھ پتلی انتظامیہ نے راشٹریہ سوائم سیوک سنگھ اور دیگر ہندو انتہا پسندوں کی ایما پر تحریک آزادی اور مقبوضہ علاقے میں مسلمانوں کی آبادی کے تناسب کو بگاڑنے کے لیے اپنی سازشوں کا سلسلہ تیز کر لیا ہے۔



مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

13/06/2015 - 14:45:21 :وقت اشاعت