سندھ حکومت سے 230 ارب روپے والے غیرقانونی وصولی پر بات ہوئی ہے ‘ڈی جی رینجرز کی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ جون

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 12/06/2015 - 14:21:52 وقت اشاعت: 12/06/2015 - 14:19:41 وقت اشاعت: 12/06/2015 - 14:17:45 وقت اشاعت: 12/06/2015 - 14:17:45 وقت اشاعت: 12/06/2015 - 14:17:45 وقت اشاعت: 12/06/2015 - 14:16:28 وقت اشاعت: 12/06/2015 - 14:16:28 وقت اشاعت: 12/06/2015 - 14:16:28 وقت اشاعت: 12/06/2015 - 14:12:00 وقت اشاعت: 12/06/2015 - 13:43:57 وقت اشاعت: 12/06/2015 - 13:20:42
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

سندھ حکومت سے 230 ارب روپے والے غیرقانونی وصولی پر بات ہوئی ہے ‘ڈی جی رینجرز کی رپورٹ مبہم ہے ‘اعتزاز احسن

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 12 جون۔2015ء)پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنما اور سینٹ میں قائد حزب اختلاف سینیٹراعتزازاحسن نے کہا ہے کہ سندھ حکومت سے 230 ارب روپے والے غیرقانونی وصولی سے متعلق بات ہوئی ہے ‘ڈی جی رینجرز کی رپورٹ مبہم ہے ‘دو سو تیس ارب کے حتمی اعداد و شمار کس طرح نکالے گئے ہیں ‘ تحقیقات ہونی چاہیے۔ پارلیمنٹ ہاوٴس کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے اعتزاز احسن نے کہاکہ کراچی میں بھتہ خوری، ایرانی تیل کی اسمگلنگ سمیت دیگرجرائم مشرف دور سے شروع ہوئے جبکہ کہا گیا کہ سندھ میں 230 ارب روپے کی کرپشن ہوئی تاہم مخصوص عدد کس طرح نکالا گیا اس کی تحقیقات ہونی چاہیے اور ایپکس کمیٹی کے اجلاس کے ایک ہفتے بعد یہ انکشاف کرنے کا کیا مقصد ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایرانی

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

12/06/2015 - 14:16:28 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان