ایل این جی منصوبوں کی تکمیل میں حفاظتی لائحہ عمل مدنظر رکھنا اہم ضرورت ہے
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات جون

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 11/06/2015 - 17:33:56 وقت اشاعت: 11/06/2015 - 17:29:35 وقت اشاعت: 11/06/2015 - 17:28:11 وقت اشاعت: 11/06/2015 - 17:28:11 وقت اشاعت: 11/06/2015 - 17:22:37 وقت اشاعت: 11/06/2015 - 17:18:51 وقت اشاعت: 11/06/2015 - 17:17:31 وقت اشاعت: 11/06/2015 - 17:17:31 وقت اشاعت: 11/06/2015 - 17:14:54 وقت اشاعت: 11/06/2015 - 16:56:36 وقت اشاعت: 11/06/2015 - 16:53:58
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

ایل این جی منصوبوں کی تکمیل میں حفاظتی لائحہ عمل مدنظر رکھنا اہم ضرورت ہے

تیل و گیس سیکٹر سے تعلق رکھنے والے معروف ملکی و غیر ملکی ماہرین کا سیمینار سے خطاب

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 11 جون۔2015ء) تیل و گیس سیکٹر سے تعلق رکھنے والے معروف ملکی و غیر ملکی ماہرین نے کہاہے کہ ملک میں جاری توانائی بحران کو ختم کرنے کے لیے لگائے جانیوالے ایل این جی منصوبوں کی حساسیت، اہمیت اور بے پناہ لاگت کو مدنظررکھتے ہوئے بین الاقوامی معیار کے مطابق حفاظتی لائحہ عمل اختیار کرنا کسی بھی منصوبے کی تکمیل کا لازمی جزو ہے۔

تیل و گیس کے ماہرین کے مطابق حفاظتی لائحہ عمل کو نظر انداز کرنا انسانی جانوں کے ضیاع، ماحولیاتی تباہی اور بھاری مالی نقصان کا سبب بن سکتا ہے جبکہ ایندھن کو ذخیرہ کرنے والے پلانٹس اوردوسری صنعتوں میں اگر سخت حفاظتی انتظامات کا خیال نہ رکھا جائے تو اچانک کوئی حادثہ پیش آ سکتا ہے جس سے بڑے پیمانے پر نقصان کا خطرہ رہتا ہے۔ وہ جمعرات کو وفاقی دالحکومت میں منعقد کیے گئے ایک سیمینار سے خطاب کررہے تھے ۔

ایونسیون کے چیف ایگزیکٹو آفیسر بختیار ایچ وائیں نے اپنے خطاب میں کہاکہ پروسیس سیفٹی انتہائی اہمیت کی حامل ہے اور کسی بھی صنعت کا ناگزیر تقاضا ہے جبکہ اس پر عمل درآمد اور توجہ دینے سے نہ صرف پیداواری عمل میں خلل پیدا نہیں ہوتا بلکہ ایسے نتائج سے بھی محفوظ رہا جا سکتا ہے جو انسانی جانوں اور ماحول کے لیے نقصان دہ ثابت ہو سکتے ہیں ۔

انہوں نے کہاکہ سیفٹی کے انتظامات سے لیس نظام کسی بھی صنعتی عمل کو درپیش مشکلات

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

11/06/2015 - 17:18:51 :وقت اشاعت