امن مشن کے فوجی سیکس کے بدلے اشیا دیتے ہیں: اقوام متحدہ
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات جون

امن مشن کے فوجی سیکس کے بدلے اشیا دیتے ہیں: اقوام متحدہ

نیو یا رک(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 11 جون۔2015ء) اقوام متحدہ کی ایک رپورٹ کے مسودے میں کہا گیا ہے کہ اقوام متحدہ کے امن مشن کے فوجی باقاعدگی سے لوگوں کو سیکس کے بدلے میں اشیا دیتے ہیں۔اقوام متحدہ کی رپورٹ کے مسودے میں کہا گیا ہے کہ ہیٹی اور لائبیریا میں سینکڑوں عورتیں بھوک اور مفلسی کے باعث اپنے آپ کو سیکس کے لیے فراہم کرنے پر مجبور ہوتی ہیں۔

اس کے بدلے میں ان خواتین کو زیورات، نقدی، موبائل فون اور دیگر اشیا دی جاتی ہیں۔رپورٹ کے مسودے میں کہا گیا ہے کہ 2008 سے 2013 تک 480 ایسے واقعات رپورٹ ہوئے ہیں۔ان واقعات میں ایک تہائی واقعات میں بچے بھی شامل ہیں۔اقوام متحدہ کی رپورٹ کے مطابق ہیٹی اور لائبیریا میں سینکڑوں خواتین سے سروے کیا گیا۔ برطانوی خبر رساں ایجنسی کے مطابق ان خواتین نے کہا کہ بھوک، مفلسی اور لائف

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

11/06/2015 - 11:46:13 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان