بجٹ میں سہولیات اشرافیہ کو دی گئیں غریبوں کیلئے مکان کی تجویزتک نہیں،تاج حیدر ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ جون

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:30:24 وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:25:26 وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:25:26 وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:25:26 وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:24:11 وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:24:11 وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:24:11 وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:22:05 وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:20:05 وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:18:54 وقت اشاعت: 10/06/2015 - 21:15:23
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

بجٹ میں سہولیات اشرافیہ کو دی گئیں غریبوں کیلئے مکان کی تجویزتک نہیں،تاج حیدر

صنعت و زراعت میں مزید انوسٹمنٹ کی جانی چاہیے ایم حمزہ، سینٹ بجٹ میں ترمیم نہیں کرسکتی ہم تو صرف دل پشوری کیلئے بولتے رہتے ہیں،سینیٹر فرحت اللہ بابر , عوام نے حکومت سے امیدیں توڑ دی ہیں، بیرسٹر سیف،بجٹ میں وویمن ڈویلپمنٹ کا کوئی پلان نہیں ،ستارہ ایاز،سینٹ میں بجٹ پر بحث ،اجلاس آج تک ملتوی

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 10 جون۔2015ء) سینٹ اجلاس میں بجٹ پر سفارشات اور ترمیم کا اختیار ایوان بالا کے پاس نہ ہونے کے باعث ارکان میں بحث کی دلچسپی کم ہوگئی ۔ کسی نے دل پشوری ، کسی نے وقت گزاری اور بیشتر نے دیگر مسائل کا احاطہ کرتے ہوئے دن گزار دیا ۔ سینیٹر تاج حیدر نے بجٹ بحث میں حصہ لیتے ہوئے کہا ہے کہ گزشتہ بجٹ کی طرح اس سال بھی سینٹ سفارشات پر عمل نہیں کیا جائے گا پاک چائنہ راہداری پر پاکستان ٹرک دوڑیں تو ملکی معیشت مضبوط ہوگی سٹاک ایکسچینج کی بلندی ان شخصیات کیلئے ہے جو لوگ ڈرائنگ روم میں بیٹھ کر منافع کماتے ہیں باہر ممالک اور اندرون ملک میں کافی صنعتیں لگائی جارہی ہیں تاکہ بلیک منی کو وائٹ منی کیا جاسکے ۔

انہوں نے کہا کہ تمام سہولیات اشرافیہ کو دیدی گئیں غریبوں کیلئے 60سکوائر فٹ مکان کی بھی تجویز زیر غور نہیں ہے زراعت میں سکیم ان زمینداروں کے لیے جو پہلے سے امیر زادے ہیں دو سے پانچ ایکڑ والے زمینداروں کیلئے کیا سہولیات لائے ہیں غذائی اشیاء پر سیلز ٹیکس غریبوں کو مزید بھوکا مارنے کی سازش ہے موجودہ بجٹ میں سندھ کو 6.8 بلین ملیں گے جو کہ پی ایس ڈی پی شیئر کی روح کیخلاف ہے ۔

سینیٹر ایم حمزہ نے کہا کہ انرجی سیکٹر میں زیادہ سے زیادہ توجہ کی ضرورت ہے فارن ایکسچینج میں اضافہ خوش آئند ہے حکومت مبارکباد کی مستحق ہے انہوں نے مزید کہا کہ صنعت میں زراعت کی آپس میں لڑائی نہیں دونوں شعبوں میں مزید انوسٹمنٹ کی جانی چاہیے حکومت نے 1300 روپے فی من گندم کی قیمت تو مقرر کردی مگر کسانوں کو 1100 روپے فی من بھی لینے کو کوئی تیار نہیں یہ ظلم ہے کہ کاشتکاروں کے حقوق پر ڈاکہ ہے زراعت کو حکومت کے نظر انداز کیا تو پھر ہمارا ترقی کا خواب ادھورا رہ جائے گا ٹریکٹر پر ٹیکس کا خاتمہ ضروری ہے ٹیوب ویل ، نہروں کے پانی کو ضیاع ہونے سے بچانا چاہیے بجٹ میں خوبیاں اور خامیاں دونوں موجود ہیں حالانکہ بجٹ کی تیاری میں ارکان اسمبلی کو پہلے سے آگاہ کیا جانا چاہیے ۔

تاکہ بھلائی اور فائدے کیلئے سالانہ اس اہم دستاویز کو مرتب کیا جانا چاہیے ۔ سینیٹر فرحت اللہ بابر نے کہا کہ آئین کی روپر سینٹ بجٹ میں ترمیم نہیں کرسکتی ہم تو صرف دل پشوری کیلئے بولتے رہتے ہیں بجٹ اہم دستاویز مگر اس کے پیچھے ایک اہم سیاسی خوفناک پیغام مخفی ہے انہوں نے کہا کہ پاک چائنہ راہداری منصوبہ پر ویسٹرن روٹ کو نظر انداز کردیا گیا ہے بلکہ ایسٹرن روٹ کے لنکن کو کسی اور پراجیکٹ کے ساتھ نتھی کیا گیا ہے جو کہ خطرناک پہلو ہے پاک چائنہ راہداری منصوبہ کو متنازعہ بنانے کیلئے بھیانک سازش کی جارہی ہے فاٹا میں یونیورسٹی کیلئئے رقم پچیس کروڑ مختص کئے گئے جبکہ تخمینہ پانچ ارب روپے ہے اس برق رفتاری سے منصوبہ پر کام شروع کیا گیا تو دس سال مکمل ہیں ہوسکیں گے ۔

سینیٹر بیرسٹر سیف نے کہا کہ ایوانوں میں جب صدائیں آنے لگیں کہ خدا کیلئے رحم کرو غریبوں کو مت مارو تو یقین ہوجانا چاہیے کہ اب عوام نے حکومت سے امیدیں توڑ دی ہیں بجٹ بحث کو کون کون اہم کہتا ہے اگر ہے تو سینٹ کے کورم پر نظریں دوڑائیں چند لوگ بیٹھے ہیں بجٹ کو نظر انداز کرنے سے پہلے آئین کے آرٹیکل 8کو دیکھ لیجئے کہ کیا ہم اس بجٹ کی منظوری دے سکتے ہیں آرٹیکل 97 کی روح سے بھی بجٹ متصادم ہے آرٹیکل 38کی شق ای کے ساتھ بھی بجٹ ٹیلی نہیں کرتا ہے انہوں نے کہا کہ ہم اس معارشرے کی طرف گامزن ہیں جہاں بچے دودھ کی جگہ غم پیتے ہیں اس بجٹ کو ہم بالکل نہیں مانتے ۔

سینیٹر سعود مجید نے بجٹ پر بحث میں کہا کہ کون کہتا ہے کہ بجٹ متوازن نہیں ہے حکومت اور وفاقی وزیر خزانہ کومبارکباد پیش کرتا ہوں موجودہ حالات میں ایسا متوازن بجٹ پیش کرکے عوام کے دل کی ترجمانی کی ہے ۔ سینیٹر ستارہ ایاز نے کہا کہ بجٹ کو صرف آئندہ الیکشن کی تیاری کیلئے بنایا گیا ہے گھریلو عورتیں کل کی طرح

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

10/06/2015 - 21:24:11 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان