فاٹا میں نوجوان نسل کو جدید تعلیم وتربیت کے ذریعے قومی دھارے میں شامل کرنے کی ضرورت ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:17:26 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:14:33 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:14:33 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:14:33 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:13:16 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:13:16 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:13:16 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:10:23 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:01:52 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:00:04 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 18:59:20
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

فاٹا میں نوجوان نسل کو جدید تعلیم وتربیت کے ذریعے قومی دھارے میں شامل کرنے کی ضرورت ہے ،قائمہ کمیٹی سینٹ اوورسیز پاکستانیز،فاٹا میں 200 خواتین اساتذہ کے ذریعے پانچ سالہ منصوبہ کے تحت بچوں کو شیلٹر ہومز میں تعلیم دی جائے،چیئر مین انجینئر ملک رشید ، فاٹا سے تعلق رکھنے والے 3سو افراد کو فنی تربیت کے بعد سعودی عرب ، قطر، دبئی بھیجا جائے، ڈی جی او پی ایف ،اربوں ڈالر کا زرمبادلہ بھیجنے والے پاکستانیوں کے خاندان کے مسائل کا حل اولین ترجیح ہے ۔ وفاقی وزیر صدر الدین رشدی

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔23 جنوری ۔2014ء)قائمہ کمیٹی سینٹ اوورسیز پاکستانیز اور انسانی وسائل کی ترقی فاٹا میں جوان نسل کو جدید تعلیم وتربیت کے ذریعے قومی دھارے میں شامل کرنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ فاٹا میں 200 خواتین اساتذہ کے ذریعے پانچ سالہ منصوبہ کے تحت بچوں کو شیلٹر ہومز میں تعلیم دی جائے ۔ جمعرات کو قائمہ کمیٹی کا اجلاس چیئرمین سینیٹر انجینئر ملک رشید احمد خان کی زیر صدارت ہوا جس میں سینیٹرز سحر کامران، محمد علی رند، ملک نجم الحسن، پروفیسر ساجد میر نے شرکت کی تاہم آئندہ اجلاس میں فاٹا سیکر ٹریٹ و گونر ر سیکرٹریٹ کے سکیرٹریز کو بھی طلب کیا گیا ہے اجلاس کے دور ان بریفنگ دیتے ہوئے وفاقی وزیر سمند ر پار پاکستانیز پیر صدرالدین رشدی نے کہا کہ تارکین وطن ملک اور قوم کا قیمتی اثاثہ ہیں اربوں ڈالر کا زرمبادلہ بھجنے والے پاکستانیوں اُن کے خاندان کے مسائل کا حل اولین ترجیح ہے ۔

شکایات کے فوری حل کے لیے وزارت کی ویب سائیٹ پر کمپلینٹ باکس رکھ دیا گیا ہے ۔ سفارشی اور غیر متعلقہ عملہ کو ہٹانے میں وقت درکار ہے ۔ سعودی عرب نے ہندوستان کے ساتھ نرم شرائط پر مفاہمتی یاداشت پر دستخط کیے ہیں وزیراعظم پاکستان سعودی عرب کے ساتھ لیبر پالیسی کا بہتر معائدہ کرنے کے لیے کوشاں ہیں ۔ تارکین وطن او ر اُن کے خاندان کی شکایات کے ازالے اور ذیادہ ریلف دینے سے حکومت جمہوریت اور پارلیمنٹ پر اعتماد میں اضافہ ہو گا ۔

اس موقع پر چیئرمین کمیٹی انجینئر رشید احمد خان نے کہا کہ سابق صدر آصف علی زردار ی کی ذاتی کوشش سے دبئی ، یواے ای ، اور سعودی عرب میں پھنسے ہوئے تارکین وطن کے معاملات حل ہو گئے تھے ۔ موجودہ حکومت بھی مشرق وسطح اور یورپ کے ممالک میں موجود تارکین وطن نے مسائل کے حل کے لیے اور

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

23/01/2014 - 19:13:16 :وقت اشاعت