شکیل آفریدی کا معاملہ عدالت میں ہے،امریکی درخواست پر رہائی کا کوئی امکان نہیں ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:14:33 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:14:33 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:14:33 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:13:16 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:13:16 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:13:16 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:10:23 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:01:52 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 19:00:04 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 18:59:20 وقت اشاعت: 23/01/2014 - 18:59:20
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

شکیل آفریدی کا معاملہ عدالت میں ہے،امریکی درخواست پر رہائی کا کوئی امکان نہیں ، فیصلہ عدالت ہی کریگی،پاکستان ،سرحد پر پاکستانی ٹرک روکنے کے معاملے پر بھارتی ڈپٹی قونصلر کو طلب کر کے احتجاجی مراسلہ دیا ہے ،بنگلہ دیش کی صورتحال پر نظر ہے فروری میں ہونیوالے ٹی ٹوئنٹی سے قبل سیکورٹی کی صورتحال کو دیکھا جائیگا،ترجمان دفتر خارجہ ، امریکہ سے اسٹریٹجک مذاکرات کیلئے سرتاج عزیز 24 جنوری کو امریکہ روانہ ہوں گے،تسنیم اسلم کی ہفتہ وار بریفنگ

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔23 جنوری ۔2014ء)دفتر خارجہ کی ترجمان تسنیم اسلم نے کہا ہے کہ ڈاکٹر شکیل آفریدی کا معاملہ عدالت میں ہے،امریکی درخواست پر شکیل آفریدی کی رہائی کا کوئی امکان نہیں ۔ فیصلہ عدالت ہی کریگی ۔سرحد پر پاکستانی ٹرک روکنے کے معاملے پر بھارتی ڈپٹی قونصلر کو طلب کر کے احتجاجی مراسلہ دیا ہے ۔بنگلہ دیش کی صورتحال پر نظر ہے ۔

فروری میں ہونیوالے ٹی ٹوئنٹی سے قبل سیکورٹی کی صورتحال کو دیکھا جائیگا جمعرات کو ہفتہ وار بریفنگ کے دور ان ترجمان دفتر خارجہ تسنیم اسلم نے شکیل آفریدی کو امریکہ کے حوالے کیے جانیکا امکان رد کرتے ہوئے کہا کہ یہمعاملہ عدالت میں ہے فیصلہ عدالت کریگی۔ ترجمان دفتر خارجہ تسنیم اسلم نے بتایا کہ گذشتہ شام سپین کے وزیر خارجہ مسٹر گونزالو دی بونیتیو نے وزیراعظم کے مشیر برائے قومی سلامتی و امور خارجہ سرتاج عزیز کو ٹیلیفون کرکے سپین کے سائیکلسٹ کو ایران کی سرحد پار کرکے پاکستان داخل ہوا تھا دہشت گردوں کی طرف سے اسکے اغواء کی سازش ناکام بناتے ہوئے چھ لیویز اہلکاروں کی شہادت پر تعزیت کی ۔

ترجمان نے بتایا کہ رواں سال دو پاکستانیوں کو منشیات سمگلنگ کے جرم میں سعودی عرب میں سزائے موت دی گئی ہے جبکہ 2013ء میں ایک پاکستان کو سزائے موت دی گئی تھی جبکہ مزید چار پاکستانیوں کی سزائے موت کے بارے ابھی تک تصدیق نہیں ہو سکی ۔ ترجمان نے بتایا کہ سعودی حکومت منشیات سمگلنگ کے الزام میں سزائے موت پانے والے غیرملکیوں کے سفارتی مشنز کو پیشگی اطلاع نہیں دیتی ۔

جس کے باعث صرف ان افراد کی تصدیق کی جا سکتی ہے جو سزائے موت پا چکے ہوں ۔ پاکستان کی امداد کو ڈاکٹر شکیل آفریدی کی رہائی سے مشروط کرنے کے امریکہ اقدام بارے سوال کے جواب میں ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ امریکہ نے33ملین ڈالر کی امداد کو شکیل آفریدی کی رہائی سے مشروط نہیں کیا ، پاکستان اپنا واضح موقف پہلے بھی پیش کر چکا ہے ۔ امریکی درخواست پر ڈاکٹر شکیل آفریدی کی رہائی کاامکان

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

23/01/2014 - 19:13:16 :وقت اشاعت